رانا ثناء اللہ کا کل کا بیان شرمناک ، معافی مانگیں،ن لیگ کے پاس اور کوئی حل رہ نہیں گیا، ڈاکٹر مراد راس

جب تک وہ معافی نہیںمانگیںان کا پیچھا نہیںچھوڑا جائے گا،پی ٹی آ ئی رہنماء

منگل مئی 21:14

رانا ثناء اللہ کا کل کا بیان شرمناک ، معافی مانگیں،ن لیگ کے پاس اور ..
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 01 مئی2018ء) پاکستان تحریک انصاف سنٹرل پنجاب کے سیکرٹری اطلاعات ڈاکٹر مراد راس نے کہاہے کہ رانا ثناء اللہ کا کل کا بیان شرمناک ہے ، ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ رانا ثنائاللہ معافی مانگے،،ن لیگ کے پاس اور کوئی حل رہ نہیں گیا, ن لیگ کے کسی آدمی نے بھی مذمت نہیں کی، مریم صفدر کو ٹویٹ کرتے ایک منٹ لگتا ہے مگر مذمت نہیں کی، رانا ثناء للہ جب پیپلز پارٹی میں تھا تو مریم کیخلاف باتیں کرتا تھا، یہ آدمی اس لیول پر گر جاتا ہے کہ عورتوں پر باتیں کرنے پہ آجاتا ہے، پی ٹی آئی کے کامیاب جلسے کے بعد ان کے پاس اب کچھ نہیں رہا، راناثناء اللہ فوری معافی مانگیں ، جب تک وہ معافی نہیںمانگیںان کا پیچھا نہیںچھوڑا جائے گا، ان خیالات کااظہار ڈاکٹر مراد راس نے ایم پی ایز سعدیہ سہیل رانا ، ڈاکٹر نوشین حامدمعراج ،عالیہ حمزہ ملک ، مسرت جمشید چیمہ، عظمیٰ کاردار ، ڈاکٹر سیمی بخاری ، شہناز خان ، عائشہ نعیم ، صائمہ شوکت ،فاطمہ عثمان کے ہمراہ چیئرمین سیکرٹریٹ گارڈن ٹائون میںپریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا، انہوںنے کہاکہ رانا ثناء اللہ کو بے نظیر بھٹونے مریم نواز کے خلاف نازیباالفاظ استعمال کرنے پیپلزپارٹی سے نکالاتھا، (ن) لیگ کوخود راناثناء اللہ کے خلاف ایکشن لینا چاہئے اور اسے پارٹی سے نکالا جائے ، انہوںنے کہاکہ رانا ثناء اللہ کوسوچنا چاہئے کہ ان کے گھر میں بھی مائیں، بہنیں اور بیٹیاں ہیں، اتنا تہذیب سے گرکر راناثناء اللہ نے تحریک انصاف کی خواتین کے بارے میںنازیبازبان استعمال کی ، انہوں نے کہاکہ رانا ثناء اللہ کو شرم آنی چاہئے، ڈاکٹر مراد راس نے کہاکہ رانا ثناء للہ کے بیان پر کسی (ن) لیگ کے لیڈر کو مذمت کرنے کی توفیق نہیں ہوئی کہ اس کے خلاف کوئی بیان دیتے ، حتی کہ نوازشریف ، شہبازاور مریم نوازنے بھی کوئی بیان ٹویٹ نہیں کی، اس کا مطلب ہے کہ رانا ثناء اللہ (ن) لیگ کی قیادت کے کہنے پر ایسا کررہے ہیں، رانا ثناء اللہ جب پیپلزپارٹی میں تھے تو (ن) لیگ کی خواتین کے خلاف بے ہودہ الفاظ کا استعمال کرتے تھے اور جب (ن) لیگ میںہیںتو تحریک انصاف کی خواتین کے بارے میںاول فول بکتے ہیں، عابد شیر ، طلال چوہدری کے الفاظ میںبھی مذمت کرتے ہیں اورہمارا مطالبہ ہے کہ عابدشیرعلی ، طلال چوہدری بھی خواتین کے خلاف نازیبا زبا ن استعمال کرنے معافی مانگیں، مراد راس نے کہاکہ ہم بھی جواب دے سکتے ہیںمگر اتنے نیچے لیول پر جا کر جواب نہیںدیںگے اور ہمیں ایسے الفاظ استعمال کرنے میں شرم محسوس ہوتی ہے ، انہوںنے کہاکہ عائشہ گلالئی کی پارٹی چھوڑنے پر سوشل میڈیا پر منفی خبریں چلنی شروع ہوگئی تو چیئرمین عمران خان نے خود اپنے کارکنوں منع تھاکہ کوئی بھی ورکر عائشہ گلالئی کے خلاف منفی پروپیگنڈا نہ کرے ، (ن) لیگ کو سٹینڈ لینا چاہئے اور رانا ثناء اللہ کو فوری پارٹی نکال دینا چاہئے، عالیہ حمزہ ملک نے کہاکہ اتوار کوچیئرمین نے مینارپاکستان میںخواتین کے حقوق کی بات کی یہ تحریک انصاف کا منشور ہے ، جبکہ اگلے ہی دن راناثناء نے (ن) لیگ کے منشور پر عمل کرتے ہوئے تحریک انصاف کی خواتین کے خلاف نازیبا زبان استعمال کیئے، انہوں نے کہاکہ (ن) لیگ کی گندی ذہنیت ہے ، انہوںنے ہمارے چیئرمین کی بیوی کے خلاف جس طرح کی زبان استعمال گئی ہم اس کی بھی مذمت کرتے ہیں، تحریک انصاف پر جتنے بھی پتھر پھینکیںگے ہم اتنا ہی اوپر جائیںگے، عالیہ حمزہ نے کہاکہ آئندہ کوشش کریں، (ن) لیگ کا چہرہ پہلے ہی عوام کے سامنے بے نقاب ہوچکا ہے ،انہوںنے کہاکہ ہم چیئرمین کے لئے ایک ایک گھر میں جا کر ووٹ مانگیں گی اور (ن) لیگ کے حواریوں کو بے نقاب کریںگی، ایم پی ایز سعدیہ سہیل نے کہاکہ راناثناء اللہ ایک گٹر ہے ،گٹر جب کھلتا ہے تو اس میںبو آتی ہے ،،رانا ثناء اللہ گند ہے ، جتنا اوپر سے کالا ہے اتنا ہی اس کادل بھی کالا ہے ، خواتین کے خلاف بے ہودہ زبان استعمال کرنا (ن) لیگ کا طرہ امتیازہے ، مسرت جمشیدچیمہ نے کہاکہ (ن) لیگ والے سوشل میڈیاتحریک انصاف کی خواتین کے خلاف منفی پروپیگنڈہ بند کریں ور نہ ہم بھی بتائیںگے کہ مریم ،،کیپٹن صفدر سے کہاں کہا ں ملتی رہی ہیں ، ہماری خاموشی کاامتحان نہ لیا جائے ورنہ ہم بھی انہیں بے نقاب کریںگی ، عظمی کاردار نے کہاکہ عمران خان عورتوں کی عزت کرتا ہے اور وہ چار بہنوں اکلوتا بھائی ہے اور اس نے خواتین کی عزت کرنے کی تربیت حاصل کی ہے ، عمران خان نے اپنی ماں کے نام پر شوکت خانم ہسپتال بنایا ہے ۔