موجودہ حکومت کا سال کا بجٹ پیش کرنا پری پول دھاندلی ہے،محمد رضوان یوسف

پاکستان کی خود مختاری آئی ایم ایف اور ورلڈ بینک کے پاس گروی رکھ دی گئی ہے،مرکزی رہنما تحریک لبیک یارسول اللہ

منگل مئی 21:41

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 01 مئی2018ء) تحریک لبیک یارسول اللہ کے مرکزی رہنما محمد رضوان یوسف نے کہا ہے کہ موجودہ حکومت کا سال کا بجٹ پیش کرنا پری پول دھاندلی ہے۔ بجٹ سے عوام کی امیدیں پوری نہیں ہوئیں۔ ہر بجٹ میں عوام کی بجائے حکام کو فائدہ پہنچایا جاتا ہے۔ پاکستان کی خود مختاری آئی ایم ایف اور ورلڈ بینک کے پاس گروی رکھ دی گئی ہے۔

عالمی مالیاتی اداروں کی ہدایات پر بننے والا بجٹ عوام دوست نہیں ہو سکتا۔ ن لیگ کی حکومت کی ناکام معاشی پالیسیوں کا خمیازہ آئندہ حکومت کو بھگتنا پڑے گا۔ مضبوط معیشت کے بغیر ملک کی خود مختاری اور سالمیت کا تحفظ نہیں کیا جا سکتا۔ ملک کو قرضوں کی دلدل میں ڈبو دیا گیا ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سوشل میڈیا کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔

(جاری ہے)

رضوان یوسف نے کہا کہ عوام آئندہ انتخابات 2018 میں پاکستان مسلم لیگ (ن) اور تحریک انصاف کو یکسر مسترد کرکے تحریک لبیک پاکستان کا ساتھ دیں تاکہ وطن عزیز پاکستا کو صحیح معنوں میں اسلامی جمہوری ملک بنایا جاسکے اور پاکستان میں نظام مصطفی ﷺ کا نفاذ کرنے کا خواب شرمندہ تعبیر ہوسکے۔ الیکشن میں بھارت کے یار اور ختم نبوت کے غدار عبرت کا نشان بنیں گے۔ موجودہ حکومت کے پانچ سال ناکامیوں کی داستان ہے۔ قوم ووٹ کی طاقت سے ظلم اور جرم کا راستہ روکنے کے لئے بیتاب ہے۔ پاکستان کے غداروں کو اپنا اتحادی بنانے والا نواز شریف قوم کا اعتماد کھو چکا ہے۔ متنازعہ ایمنسٹی سکیم کو بجٹ کا حصہ بنانا ملک دشمنی ہے۔