کرپشن معاشر ے میں ناسور کی حیثیت رکھتی ہے ،نیب بدعنوانی کے خلاف جہاد کررہا ہے،الطاف باوانی

ہمیں لوگوں میں نبی اکرمؐ کی اس حدیث کو پہنچانا ہوگا کہ رشوت لینے اور دینے والا دونوں جہنمی ہیں ،کرپشن کا خاتمہ اولین ترجیح ہے،ڈی جی نیب سندھ جن لوگوں کا دامن صاف ہے ان کو نیب سمیت کسی بھی ادارے سے ڈرنے کی ضرورت نہیں ہے،کراچی آرٹس کونسل میں تقریب سے خطاب اور میڈیا سے گفتگو

بدھ مئی 21:53

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 02 مئی2018ء) قومی احتساب بیورو (نیب) سند ھ کے ڈائریکٹر جنرل الطاف باوانی نے کہا ہے کہ کرپشن معاشر ے میں ناسور کی حیثیت رکھتی ہے ۔نیب بدعنوانی کے خلاف جہاد کررہا ہے ۔ہمیں لوگوں میں نبی اکرمؐ کی اس حدیث کو پہنچانا ہوگا کہ رشوت لینے اور دینے والا دونوں جہنمی ہیں ۔عوام کے تعاون سے ملک سے کرپشن کا خاتمہ ہماری اولین ترجیح ہے ۔

جن لوگوں کا دامن صاف ہے ان کو نیب سمیت کسی بھی ادارے سے ڈرنے کی ضرورت نہیں ہے ۔ان خیالات کا اظہار انہوںنے بدھ کو آرٹس کونسل کراچی میں نیب کے زیر اہتمام طلبہ کے پینٹنگ مقابلوں کی تقریب سے خطاب او ر میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا ۔الطاف باوانی نے کہا کہ اس بات کو عام کرنا ضروری ہے کہ کرپشن ایک بیماری کی طرح ہے جو کسی بھی معاشرے کو تباہ کردیتی ہے ۔

(جاری ہے)

ہم کرپشن کے سدباب کے لیے زندگی کے ہر شعبے سے تعلق رکھنے والے افراد میں آگاہی فراہم کررہے ہیں اور خصوصی طور پر طلبا کو اس حوالے سے کیا جارہا ہے ۔انہوںنے کہا کہ کرپشن سے ملک کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایا ہے ۔بدعنوانی ملک کی ترقی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے ۔نیب کرپشن کے خلاف جہاد کررہا ہے اور اس جہاد میں ہمیں عام لوگوں کے تعاون کی بھی ضرورت ہے ۔

مشترکہ جدوجہد سے ہی ملک کو کرپشن کی لعنت سے نجات دلائی جاسکتی ہے ۔ڈی جی نیب سندھ نے کہا کہ رشوت لینے اور دینے کے عمل کو ہمارے مذہب میں انتہائی ناپسندیدگی کے ساتھ دیکھا گیا ہے ۔نبی کریم ؐ کی حدیث ہے کہ رشوت لینے اور دینے والا دونوں جہنمی ہیں ۔ہمیں اس حدیث کو عام کرنا ہوگا تاکہ لوگ رشوت کے دینی اور دنیاوی نقصانات سے آگاہ ہوسکیں ۔الطاف باوانی نے کہا کہ عوام کو بھی اپنے حقوق کا علم ہونا چاہیے ۔

اگر کسی ادارے میں ان سے کسی کام کے سلسلے میں رشوت طلب کی جاتی ہے تو وہ اس سے انکار کردیں ۔ہر کام کو قانون کے مطابق کروانا عوام کی ذمہ داری ہے اور اگر کوئی افسر اپنے فرائض سے کوتاہی برت رہا ہے تو اس کی شکایت اعلیٰ حکام سے کی جاسکتی ہے ۔انہوںنے کہا کہ نیب بلاکسی تفریق کے کرپشن میں ملوث عناصر کے خلاف کارروائی کررہا ہے ۔نیب کا مقصد ملک سے بدعنوانی کا خاتمہ ہے اور ہم بغیر کسی دباؤ کے اپنی ذمہ داریاں ادا کرتے رہیں گے ۔ایک سوال کے جواب میں ڈی جی نیب نے کہا کہ ہماری جنگ کرپٹ لوگوں کے خلاف ہے ۔ جن لوگوں کے دامن صاف ہیں ان کو نیب سمیت کسی بھی ادارے سے ڈرنے کی ضرورت نہیں ہے ۔