جماعت اسلامی کا کوئٹہ میںموٹرسائیکل ڈبل سواری پر پابندی کی مذمت

حکومت فی الفور موٹر سائیکل ڈبل سواری پرپابندی ختم کریں اور غریبوں کی مشکلات میں کمی کریں،بیان

بدھ مئی 23:34

کوئٹہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 02 مئی2018ء) جماعت اسلامی کے صوبائی بیان میں کوئٹہ میںموٹرسائیکل ڈبل سواری پر پابندی کی مذمت کرتے ہوئے کہاگیا ہے کہ جب کوئی ٹارگٹ کلنگ کا واقعہ ہوجائے تو حکومت کو صرف غریبوں کی سواری موٹرسائیکل ڈبل سواری نظرآتی ہے حالانکہ موٹرسائیکل ڈبل سواری پر پابندی کے باوجود ٹارگٹ کلنگ نہیں رکتی ۔حکومت فی الفور موٹر سائیکل ڈبل سواری پرپابندی ختم کریں اور غریبوں کی مشکلات میں کمی کریں دوسری طرف پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے کو مسترد کرتے ہوئے کہاگیا ہے کہ حکمرانوں نے بجٹ دھماکے بعد عوام پر پٹرولیم بم گرادیا ہے جس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ یوں محسوس ہوتاہے کہ جیسے نام نہاد عوامی نمائندوں کوغریب عوام کی مشکلات کا ادراک ہی نہیں،وہ محض اقتدارسے لطف اندوزہورہے ہیں۔

(جاری ہے)

پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے سے ملک میں مہنگائی کا طوفان آئے گا۔اشیاء ضروریہ کی قیمتیں پہلے ہی آسمان کو چھو رہی ہیں۔دن بدن بڑھتی مہنگائی کی وجہ سے اشیاء ضروریہ غریب عوام کی پہنچ سے دور ہوچکی ہیں۔

ایک طرف بے روزگاری بڑھ رہی ہے جبکہ دوسری جانب حکومت کی عوام کش ظالمانہ پالیسیوں نے کسر پوری کردی ہے۔روزگاربرائے فروخت کی وجہ سے اہل پڑھے لکھے لوگوں کے گھروں میں فاقوں کاراج ہے۔ عوام کوپہلے ہی کسی قسم کاکوئی ریلیف میسر نہیں۔ضرورت اس امر کی ہے کہ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کیاجانے والا اضافہ فی الفور واپس لیاجائے۔بیان میں کہا گیا ہے کہ رمضان المبارک کی آمد آمد ہے ۔

ماہ صیام میں دنیا بھر کی حکومتیں مسلمانوں کو ہرلحاظ سے ریلیف فراہم کرنے کی کوششیں کرتی ہیں مگر لاالٰہ الااللہ کے نام پربننے والے ملک میں خوب لوٹ مار کی جاتی ہے۔۔رمضان المبارک کے قریب آتے ہی ناجائزمنافع خور،گرانفروش اور ذخیرہ اندوز حکومتی نمائندوں کی ملی بھگت سے عوام کو دونوں ہاتھوں سے لوٹنے کے لیے پوری طرح سرگرم ہوجاتے ہیں۔ حکمرانوں کی عاقبت نااندیش پالیسیوں کی بدولت غریب عوام کی مشکلات میں دن بدن اضافہ ہوتاچلاجارہا ہے اور ان کاکوئی پرسان حال نہیں۔حکمرانوں کے اللوں تللوں اور شاہانہ اخراجات پر قابوپالیاجائے تو سالانہ بڑی رقم کوبچایاجاسکتاہے جسے عوام کی فلاح وبہبود پر خرچ کرکے ان کامعیار زندگی بہترکیاجاسکتا ہے۔