پاکستان پیپلز پارٹی صحافیوں کے خلاف بلا روک و ٹوک جاری جرائم کی روک تھام کرے گی، بلاول بھٹو زرداری

یہ بہت ہی افسوس ناک ہے کہ گذشتہ دہائی کے دوران پاکستان میں بہت سارے صحافی قتل کیئے گئے یا انہیں کسی دوسرے طریقے سے نشانہ بنایا گیا

بدھ مئی 23:41

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 02 مئی2018ء) آزادی صحافت کے عالمی دن کے موقع پر میں پاکستانی میڈیا سے منسلک ورکرز کو یقین دلاتا ہوں کہ پاکستان پیپلز پارٹی صحافیوں کے خلاف بلا روک و ٹوک جاری جرائم کی روک تھام کرے گی اور اس کو پارٹی منشور کا حصہ بھی بنایا جائے گا۔ ان خیالات کا اظہار پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے آزادی صحافت کے عالمی دن کے موقع پر اپنے پیغام میں کیا ہے، جو آج 3 مئی بروز جمعرات منایا جائیگا۔

انہوں نے کہا کہ یہ بہت ہی افسوس ناک ہے کہ گذشتہ دہائی کے دوران پاکستان میں بہت سارے صحافی قتل کیئے گئے یا انہیں کسی دوسرے طریقے سے نشانہ بنایا گیا، لیکن تقریبا ان تمام مقدمات میں ملوث ملزمان قانون کی گرفت سے آزاد ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ اس طرح کی بلا روک و ٹوک جرائم کی روکٹھام ضروری ہے اور ایسا ہو کر رہے گا۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ ان کی پارٹی صحافیوں کے مقدمات کی پیروی کے لیئے ایک غیرجانبدار اسپیشل پراسیکیوٹر جنرل مقرر کرے گی اور اسطرح کے واقعات کے متاثر صحافیوں اور ان کے اہلہ خانہ کی امداد کے لیئے جرنلسٹس پروٹیکشن فنڈ قائم کرے گی۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ جو لوگ صحافیوں پر حملے کرتے یا جرائم میں ملوث ہیں وہ آزادی اظہار اور مثبت خیالات سے خوفزدہ ہیں۔ پیپلز پارٹی ایسے عناصر کو بے نقاب کرے گی اور انہیں قانون کی گرفت میں لائے گی۔ پی پی پی چیئرمین نے کہا کہ ان کی پارٹی نظریئے اور امن امان کے نام پر اظہار آزادی پر دانستہ عائد قدغنیں ہٹا دے گی۔ انہوں نے کہا کہ معلومات اور خیالات کی آزادنہ ترسیل شہریوں کو تقویت دیتی ہے اور اس کے لیئے ضروری ہے کہ میڈیا کے لوگ اپنی پیشورانہ ذمیداریاں بے خوف و خطر ادا کر سکیں۔

پی پی پی چیئرمین نے زور دیا کہ ریاستی ادارے تمام عذر کو بالائے طاق رکھتے ہوئے صحافیوں کے خلاف جرائم میں ملوث قصورواروں کو انصاف کے کٹھڑے میں لائیں۔ بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ وہ ان تمام صحافیوں کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں جنہوں نے مشکل اور خطرناک حالات میں بھی اپنی پیشورانہ ذمیداریاں بھادری سے نبھائیں ہیں۔