زرعی سائنسدانوں اور کاشتکاروں کے درمیان روابط بڑھا کر اجناس کی پیداوار میں اضافہ ممکن بنایا جا سکتا ہے، ماہرین زراعت

جمعرات مئی 14:19

فیصل آباد۔3 مئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 مئی2018ء) جامعہ زرعیہ فیصل آباد کے ماہرین زراعت نے کہا ہے کہ زرعی سائنسدانوں اور کاشتکاروں کے درمیان روابط بڑھا کر اجناس کی پیداوار میں اضافہ ممکن بنایا جا سکتا ہے نیز اس اضافہ کے باعث اجناس کی برآمد ملکی معیشت کو مستحکم اور اقتصادی حالت کو بہتر بنانے میں بھی معاون ثابت ہو سکتی ہے۔

(جاری ہے)

کاشتکاروں کی تعلیم و تربیت اورا نہیں جدید رجحانات سے آگاہ کرنے سمیت مشاورت ، رہنمائی و معلومات کی فراہمی کے سلسلہ میں اظہار خیال کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پیداواری ٹیکنالوجی سے استفادہ، کیمیائی کھادوں کا بر وقت استعمال ، منظور شدہ بیجوں کی بوائی ، سفارش کردہ زہروں کا سپرے فی ایکڑ پیداوار میں اضافہ کا باعث بن سکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ جڑی بوٹیوں کی تلفی بھی اشد ضروری ہے جو کہ پیداوار میں کمی کا باعث بنتی ہیں ۔ انہوںنے کہا کہ کھادیں اور کرم کش ادویات کیڑوں میں قوت مدافعت کو روکتی ہیں۔ اس موقع پر انہوںنے اس امر پر بھی زور دیا کہ ماہرین زراعت کے ساتھ ساتھ محکمہ زراعت کے فیلڈ سٹاف کو بھی چاہیے کہ وہ کسانوں سے ان کے مسائل دریافت کرنے سمیت انہیں مفید مشورے بھی فراہم کرے تاکہ وہ زیادہ سے زیادہ زرعی اجناس پیدا کرنے کے قابل ہو سکیں۔

متعلقہ عنوان :