موجودہ حکومت نے ملکی بہتری کے لئے بھرپور اقدامات اٹھائے، اقلیتوں کی نشستوں میں اضافہ کیا جائے، خلیل جارج

جمعرات مئی 16:34

اسلام آباد۔ 03 مئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 مئی2018ء) مسلم لیگ (ن) کے اقلیتی رکن خلیل جارج نے کہا ہے کہ اقلیتوں کی نشستوں میں اضافہ کیا جائے‘ بجٹ بڑھایا جائے‘ موجودہ حکومت نے ملکی بہتری کے لئے بھرپور اقدامات اٹھائے۔ جمعرات کو قومی اسمبلی میں بجٹ 2018-19ء پر بحث میں حصہ لیتے ہوئے خلیل جارج نے بحث میں حصہ لیتے ہوئے 2018-19ء کے چھٹے بجٹ پر مبارکباد پیش کی اور کہا کہ پاکسان بحرانوں کا شکار ہے۔

یہاں دہشت گردی کی وجہ سے حالات اچھے نہیں تھے۔ موجودہ حکومت سے جو کچھ بھی ہوا ملکی بہتری کے لئے کیا گیا۔ بجٹ کسی کی خواہشات کے مطابق نہیں بنایا جاسکتا۔ جمہوری حکومتیں سب سے پہلے عوام کا سوچتی ہیں۔ ہر حکومت عوام کو ریلیف دینا چاہتی ہے مگر حالات کی مجبوریاں آڑے آجاتی ہیں۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ ملک کو سب سے زیادہ تعلیم‘ صحت‘ پینے کے صاف پانی‘ توانائی کے بحران سے نکلنے اور مزدوروں کی فلاح و بہبود کی ضرورت ہے۔

ملک کے حالات کو مدنظر رکھا جائے تو یہ کہا جاسکتا ہے کہ اس سے بہتر بجٹ پیش نہیں کیا جاسکتا۔ انہوں نے کہا کہ کسی حکومت نے اقلیتوں کے لئے فنڈز مختص نہیں کئے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ اقلیتوں کے لئے نشستوں میں اضافہ کیا جائے۔انہوں نے کہا کہ یوحنا آباد کے لوگوں کو بھی معافی دی جائے۔ مسیحیوں کا تعلیم کے شعبہ میں کردار مسلمہ ہے۔ اخلاقیات کا نصاب سب کے لئے ہونا چاہیے۔

ہزارہ کمیونٹی کے ساتھ پیش آنے والے واقعات پاکستان کے ساتھ ہیں۔ اقلیتوں کا کوٹہ کم ہے۔ قائداعظم کے دور میں ہر ایک کو یکساں حقوق حاصل تھے اب نہیں ہیں۔ اقلیتوں کی وزارت اقلیتی ممبر کو دی جائے۔ اقلیتی بچوں کی سکالر شپس میں اضافہ نہیں کیا گیا۔ ہمارے مذہبی مقامات کی مرمت کے لئے مختص بجٹ میں اضافہ ہونا چاہیے۔ ہماری نشستیں بڑھائیں جائیں۔ اقلیتوں کو تحفظ دیا جائے۔