مینار پاکستان جلسہ میں لاہور کے منتخب پارلیمنٹرین نے نظر انداز کر نے، عمران خان کو تحفظات پہنچانے کا عندیہ دیدیا‘ذرائع

جمعرات مئی 17:42

مینار پاکستان جلسہ میں لاہور کے منتخب پارلیمنٹرین نے نظر انداز کر نے، ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 مئی2018ء) مینار پاکستان جلسہ میں لاہور کے منتخب پارلیمنٹرین نے نظر انداز کر نے چیئر مین عمران خان کو تحفظات پہنچانے کا عندیہ دیدیا۔ذرائع کے مطابق مینار پاکستان جلسہ میں لاہور کے غیر منتخب رہنمائوں کو منتخب پارلیمنٹرین پر فوقیت دی گئی لاہور سے رکن اسمبلی شفقت محمود اور میاں محمودالرشید کو تقریر نہیں کرنے دی گئی، مقررین کی لسٹ میں ان کا نام ہی نہیں لکھا ان رہنما ئوں نے نشاندہی کی تو انہیں کہا گیاکہ وقت کم ہے اس لیے تقریر نہیں کرائی جاسکتی۔

(جاری ہے)

رکن اسمبلی علی سلمان سٹیج پر جانے کیلئے آئے تو انہیں گارڈز نے اوپر جانے سے روک دیا اور پوچھا کہ آپ کون ہیں ہمارے پاس آپ کا نام نہیں شنیلہ رتھ، ڈاکٹر نوشین حامد، نبیلہ حاکم علی اور سعدیہ سہیل رانا کے پاسز بھی نہیں بنوائے گئے، چاروں منتخب اراکین سٹیج سے نیچے عوام میں موجود رہیںپارلیمنٹرینز نے معاملے پر شدید تحفظات کا اظہار کیا ہے کہ وہ اپنے حلقوں میں کیا جواب دیں فیصلہ کیا گیا ہے کہ سینیٹرچودھری محمد سرور، شفقت محمود، میاں محمودالرشید نظر انداز ہونے والوں کی عمران خان سے ملاقات کرائیں گے۔