گھوٹکی کے قریب نوشہروفیروز کا پورا خاندان اغوا، اغوا کاروں نے مغویوں کے رہائی کے بدلے 16 لاکھ تعاوان مانگ لیا

جمعرات مئی 22:36

نوشہروفیروز (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 مئی2018ء) گھوٹکی کے قریب سے نوشہروفیروز کا پورا خاندان اغوا،، اغوا کاروں نے مغویوں کے رہائی کے بدلے 16 لاکھ تعاوان مانگ لیا، پولیس کا مغویوں کے بازیابی اور مقدمہ درج کرنے سے گریز۔

(جاری ہے)

تفصیلات کے مطابق کچھ دن قبل محکمہ ایریگشن کا ملازم اپنی بیوی اور 2 معصوم بچوں کے ہمراہ مرشد سے تعویذات لینے کے لئے گھوٹکی جارہا تھا کہ غوثپور کے کے مقام پر ڈاکوں نے انہیں فیملی سمیت اغوا کرلیا، جن میں ایریگیشن ملازم ھدایت اللہ چنہ، بیوی مسمات بیگم، 5 سالا بیٹی ثمینہ اور 15 ماہ کا بیٹا شامل ہے جبکہ اغوا کاروں نے مغوی کے رشتیداروں سے خاندان کی رہائی کے بدلے 16 لاکھ روپئے کا تعاوان طلب کیا ہے مگر افسوس اور نااہلی کی انتہا تو یہ ہے شکارپو، کشمور، گھوٹکی اور نوشہروفیروز پولیس حدود کے تنازعے پر مقدمہ درج کرنے سے گریز کررہی ہے جبکہ مغویوں کی بازیابی کے لئے کوئی اقدامات نہیں کئے جارہے ہیں جس کہ باعث متاثرین خاندان کے رشتیداروں میں تشویش کی لہر دوڑتی جارہی ہے۔

متعلقہ عنوان :