عراق، مسلح شدت پسندوں کی فائرنگ، 16نہتے شہری جاں بحق، 3 زخمی

جمعرات مئی 23:38

بغداد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 مئی2018ء) عراق میں مسلح شدت پسندوں کی فائرنگ سے 16نہتے شہری جاں بحق اور 3کو زخمی ہو گئے۔برطانوی میڈیا کے مطابقعراقی فوج کے ایک اعلان کے مطابق دارالحکومت بغداد سے 25 کلو میٹر شمال میں واقع قصبے طارمیہ میں شدت پسندوں نے نہتّے عراقی شہریوں پر فائرنگ کر دی۔ واقعے میں کم از کم 8 افراد ہلاک اور 3 زخمی ہو گئے۔

فوج کے بیان کے مطابق سکیورٹی فورسز نے مذکورہ دہشت گرد ٹولی پر قابو پا لیا۔

(جاری ہے)

ابھی تک ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد واضح نہیں ہے۔ میڈیا رپورٹوں کے مطابق مرنے والوں کی تعداد 5 سے 20 کے درمیان ہے۔ ایک عینی شاہد نے برطانوی خبر رساں ایجنسی کو بتایا کہ واقعے میں 16 افراد ہلاک اور 3 زخمی ہوئے۔عراقی حکومت نے دسمبر 2017ء میں داعش تنظیم کے خلاف فتح کا اعلان کیا تھا جس نے 2014ء میں ملک کے تقریبا ایک تہائی حصّے پر قبضہ کر لیا تھا۔تاہم تنظیم کی جانب سے بغداد اور عراق کے دیگر علاقوں میں حملوں اور دھماکوں کا سلسلہ جاری ہے۔