جماعت اسلامی کی خیبرپختونخوا میں تحریک انصاف کی حکومت سے علیحدگی

خیبرپختونخوا میں میرٹ کے قیام کے مشترکہ ایجنڈے کے لئے پرویز خٹک کے بھرپور تعاون پر مشکور ہیں ،صوبائی وزیرِ بلدیات عنایت اللہ خان کی وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کے ہمراہ مشترکہ پریس کانفرنس

جمعرات مئی 23:49

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 مئی2018ء) تحریک انصاف اور جماعتِ اسلامی کی راہیں جدا ہوگئی ہیں ،دونوں جماعتوں نے خیبرپختونخوا میں الگ ہونے کا اعلان کردیا ہے، جمعرات کو پشاور میں وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا پرویز خٹک اور صوبائی وزیرِ بلدیات عنایت اللہ خان نے مشترکہ پریس کانفرنس کی جس میں جماعت اسلامی کے 3 صوبائی وزرا اور ایک پارلیمانی سیکرٹری نے مستعفی ہونے کا اعلان کیا،اس موقع پر عنایت اللہ کا کہنا تھا کہ آج تاریخی دن ہے، اچھی شراکت اقتدار کے بعد خیبرپختونخوا حکومت سے الگ ہو رہے ہیں اور ہم نے دوستانہ ماحول میں علیحدگی اختیار کرکے اچھی سیاسی روایت قائم کی ہے، صوبے میں میرٹ کا قیام ہمارا مشترکہ ایجنڈا تھا جس کے لئے وزیراعلیٰ پرویز خٹک کے مشکور ہیں کہ انہوں نے بھرپور تعاون کیا، عوامی مفاد سب سے مقدم ہے جس کے لیے آئندہ بھی ایک دوسرے سے تعاون کریں گے۔

(جاری ہے)

وزیراعلیٰ پرویز خٹک کا کہنا تھا کہ اگلے سال فاٹا کو کے پی میں ضم کریں گے اور مدت پوری ہونے سے پہلے قانون سازی کریں گے۔ مشترکہ مفادات کونسل میں صوبے کے حقوق کیلیے بھرپور آواز اٹھائی اور آئندہ بھی مسائل کو آئین کے دائرے میں حل کریں گے۔