باغبان جامن کے پودوں کو پانی کی کمی نہ آنے دیں، زرعی ماہرینس

جمعہ مئی 15:19

فیصل آباد۔4 مئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 04 مئی2018ء) جامعہ زرعیہ فیصل آباد کے زرعی ماہرین نے باغبانوں کو ہدایت کی ہے کہ موسم گرما کے پیش نظر باغبان جامن کے پودوں کو پانی کی کمی نہ آنے دیں کیونکہ اگر اوائل عمر میں پودوںکو ضرورت کے مطابق پانی دستیاب نہ ہواتو جامن کی پیداوار بری طرح متاثر ہو سکتی ہے ۔ انہوںنے کہاکہ باغبان ہر 7سی10دن کے وقفہ سے جامن کے پودوں کو پانی دیں اور پودوں پر پھول آنے سے قبل ان کی شاخ تراشی کرتے ہوئے بیمار شاخوں کو کاٹ دیا جائے تاکہ پھولوں کی بہتر نمو ہو سکے ۔

(جاری ہے)

انہوںنے بتایاکہ گھریلو مکھیاں ، شہد کی مکھیاں ، جوئیں اور دوسرے حشرات جامن کی پولی نیشن میں اہم کردار ادا کرتے ہیں ۔ انہوںنے کہاکہ سفید مکھی ، سکیل ، پتے کھانے والی سنڈی ، پھل کی مکھی اور لیف مائنر جامن کے پتوں پر حملہ آور ہو کر اسے نقصان پہنچا سکتے ہیں۔ انہوںنے کہاکہ اگر جامن کے پودے پر کسی قسم کا کوئی حملہ محسوس ہو تو باغبان ان نقصان رساں کیڑوں کے تدارک کیلئے ماہرین زراعت یا محکمہ زراعت کے فیلڈ سٹاف کے مشورے سے مناسب زہروں کا سپرے کریں تاکہ جامن کے پھل کو نقصان سے بچایا جا سکے۔

متعلقہ عنوان :