پی ٹی آئی رہنما نعیم بخاری کے ساتھ لندن میں کیا ہوا ؟

پی ٹی آئی رہنما نعیم بخاری کے زخمی ہونے کی حقیقت سامنے آ گئی

Sumaira Faqir Hussain سمیرا فقیرحسین ہفتہ مئی 12:14

پی ٹی آئی رہنما نعیم بخاری کے ساتھ لندن میں کیا ہوا ؟
لندن (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 05 مئی 2018ء) : پی ٹی آئی رہنما نعیم بخاری کے لندن میں زخمی ہونے سے متعلق مزید تفصیلات سامنے آ گئی ہیں، نجی ٹی وی چینل کی رپورٹ کے مطابق سوشل میڈیا پر ماربل آرٹس اسٹیشن پر برقی زینوں کی وجہ سے پیش آنے والے حادثے کی ویڈیو پُرانی ہے ،کئی سوشل میڈیا پیجز پر اس ویڈیو کو نعیم بخاری سے منسوب کر کے چلایا جا رہا ہے اور کہا جا رہا ہے کہ نعیم بخاری سیڑھیوں سے گر کر زخمی ہوئے ، جبکہ یہ ویڈیو پُرانی ہے اور نعیم بخاری کے ساتھ پیش آنے والا حادثہ رات کے وقت ہوا۔

نجی ٹی وی چینل کے رپورٹر نے کہا اس حادثے کے بعد میری نعیم بخاری سے دو مرتبہ بات ہوئی ہے ۔ حادثے کے اگلے ہی دن میں نعیم بخاری صاحب کے پاس پہنچا ،چوٹ آنے سے قبل نعیم بخاری نے اپنے دوست بیرسٹر افتخار کے گھر پر ڈنر کیا تھا، پرسوں ان کی حالت کافی تویشناک تھی ، انہوں نے خود بتایا تھا کہ میری تین پسلیاں ٹوٹی ہوئی ہیں، سر پر بھی مختلف حصوں میں چوٹ آئی ہے، نعیم بخاری نے مجھے بتایا کہ وہ ماربل آرٹس اسٹیشن پر کنفیوژ ہو گئے کہ انہیں بائیں جانب جانا ہےیا دائیں جانب ، جس کے بعد وہ ٹرپ ہو کر گر گئے اور ان کو چوٹیں آئیں ۔

(جاری ہے)

نعیم بخاری سے دوبارہ بات ہونے پر انہوں نے بتایا کہ اب میری حالت پہلے سے کافی بہتر ہے ۔ خیال رہے کہ پی ٹی آئی رہنما نعیم بخاری کو لندن کے زیر زمین ریلوے اسٹیشن پر گرنے سے چوٹ آئی جس کی وجہ سے انہیں اسپتال منتقل کر دیا گیا تھا۔ لندن اسپتال میں زیر علاج ہونے پر ن لیگی کارکنان نے انہیں سخت تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ نعیم بخاری نے بیگم کلثوم نواز نے لندن میں زیر علاج ہونے پر تنقید کی تھی اور اب وہ خود لندن کے اسپتال میں زیر علاج ہیں۔ دوسری جانب پی ٹی آئی کارکنان نے لندن میں نعیم بخاری کے ساتھ پیش آنے والے حادثے پر اظہارافسوس کرتے ہوئے ان کی جلد صحتیابی کی دعا کی۔