مودی کیخلاف آواز اٹھانے کی سزا… فلمسازوں نے پرکاش راج کو کام دینا بند کر دیا

ہفتہ مئی 15:20

مودی کیخلاف آواز اٹھانے کی سزا… فلمسازوں نے پرکاش راج کو کام دینا ..
ممبئی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 05 مئی2018ء) مایہ ناز بھارتی اداکار پرکاش راج نے دعویٰ کیا ہے کہ جب سے انہوں نے بھارتی وزیراعظم نریندر مودی اور حکمران جماعت بی جے پی کے خلاف آواز اٹھائی تب سے بالی ووڈ نے کام دینا بند کردیا ہے۔

(جاری ہے)

بھارتی میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے نیشنل ایوارڈ یافتہ اداکار کا کہنا ہے کہ گزشتہ سال اکتوبر میںبھارتی صحافی گوری لنکیش کے قتل پر نریندر مودی کی خاموشی پر بی جے پی کے خلاف آواز اٹھائی تو بالی ووڈ نے مجھے سائیڈ لائن کردیا۔

راج پرکاش نے کرناٹکہ کے انتخابات میں بی جے پی کی قیادت کے خلاف مہم چلا رکھی ہے۔انہوں نے کہا کہ سآتھ فلم انڈسٹری کو ان سے کوئی مسئلہ نہیں ہے لیکن جب سے مودی کے خلاف آواز اٹھائی تب سے ہندی فلم انڈسٹری نے انہیں کام دینا بند کردیا۔