اغواء برائے تاوان کے واقعہ میں جاں بحق ہونیوالے پولیس کانسٹیبل اور وکیل کا مقدمہ 5ملزمان کیخلاف درج

ہفتہ مئی 21:35

بورے والا :(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 05 مئی2018ء) اغواء برائے تاوان کے واقعہ میں جانبحق ہونیوالے پولیس کانسٹیبل اور وکیل کا مقدمہ 5اغواء کاروں کیخلاف درج کر لیا گیا واقعات کے مطابق پولیس تھانہ فتح شاہ نے بہاولپور سی آئی اے کے اے ایس آئی محمد فیصل امین جو کہ گزشتہ روز مقدمہ نمبر 93/18بجرم 365تھانہ صدر بہاولپور میں درج مقدمہ کے ملزمان کی گرفتاری کے لیے ایک ریڈنگ پارٹی کے ہمراہ اغواء کاروں کو گرفتار کرنے کے لیے جب تھانہ فتح شاہ کی حدود میں پہنچا تو اغواء کاروں نے ایک مخصوص جگہ اڈہ خیر والا میں ملنے کے لیے کہا جہاں پر وہ پہنچے تو ایک ہنڈا کار میں سوار 5اغواء کار جو کہ مسلح آتشیں اسلحہ تھے نیچے اترے پولیس نے اغواء کاروں کو پکڑنے کی کوشش کی تو اغواء کاروں نے سیدھی فائرنگ کر دی جس سے رفیق عابد ایڈووکیٹ سکنہ بستی کرتا بہاولپوراور پولیس کانسٹیبل محمد بلال شدید زخمی ہو گئے او ر موقع پرہی جاں بحق ہو گئے پولیس کی جوابی فائرنگ سے پانچوں اغواء کاراپنی ہنڈ سٹی کار میں فرار ہو گئے واقعہ کی اطلاع ملتے ہی ایس پی انوسٹی گیشن میڈم زبیدہ پروین اور ڈی ایس پی بورے والا ملک طاہر مجید پولیس کی بھاری نفری کے ہمراہ جائے وقوعہ پر پہنچ گئے۔

(جاری ہے)

اغواء کاروں کیخلاف زیر دفعہ 302،324،353،186،148،149ت پ 7اے ٹی اے کے تحت مقدمہ درج کر کے ملزمان کی تلاش شروع کر دی ڈی پی او بہاولپورمستنصر فروز،ڈی ایس پی حاصلپور جام محمد سلیم ،ڈی ایس پی سی آئی اے غلام احمد بودلہ بھی بھاری نفری کے ہمراہ بورے والا پہنچ گئے پولیس نے ملزمان کو گرفتار کر نے کے لیے تحصیل بورے والا میں مختلف جگہوں پر چھاپے مارے کئی مشکوک افراد کو حراست میں لیا گیا ہے ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ اغواء کاروں کے گینگ میں بورے والا پولیس کا ایک سرکاری ڈرائیور بھی ملوث ہے جسے حراست میں لینے کے علاوہ گینگ کے ایک اور اہم رکن کو بھی سابق ایم این اے چوہدری نذیر احمد جٹ کے ڈیرہ سے بھی حراست میں لیا گیا ہے جوکہ خود کو پولیس کا تھانیدار ظاہر کر کے بھتہ وصولی کا مکروہ دھندہ کرتا آ رہا تھا پولیس ذرائع کے مطابق اس وقوعہ کے مرکزی کردار کے گھر اور ٹھکانوںپر پولیس کی بھاری نفری کی طرف سے آج الصبح اور دوپہر کے وقت بھی چھاپے مارے گئے مگر اصل مرکزی ملزم ہاتھ نہ آ سکا تاہم اس کے ٹھکانے سے گینگ کے ایک رکن کو پولیس نے حراست میں لے کر نا معلوم مقام پر تفتیش کے لیے منتقل کر دیا ہے پولیس ذرائع کے مطابق اس سنگین واردات کا سراغ لگا لیا گیا ہے اور آئندہ 24گھنٹوں میں تمام ملزمان قانو ن کے شکنجے میں آ جائیں گے دریں اثناء ملزمان کی فائرنگ سے جانبحق ہونے والے بہاولپور کے وکیل رفیق عابد اور پولیس کانسٹیبل محمد بلال شیخ کی نعشوں پوسٹمارٹم رات گئے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال وہاڑی میں مکمل ہونے کے بعد نعشیں تدفین کے لیے پولیس کی نگرانی میں ان کے آبائی علاقوں کو روانہ کر دی گئیں ۔