قصور، رمضان سے قبل ہی گرانفروشی عروج پر پہنچ گئی ، لوگ سر پکڑ کر بیٹھ گیے

ہفتہ مئی 21:35

قصور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 05 مئی2018ء)رمضان سے قبل ہی گرانفروشی عروج پر پہنچ گئی ، لوگ سر پکڑ کر بیٹھ گئے ، انتظامیہ خاموش تماشائی بن گئی ، سیاسی وسماجی حلقوں کا اعلیٰ حکام سے نوٹس لینے کامطالبہ تفصیلات کے مطابق ماہ صیام کی آمد آمد اور ضلعی انتظامیہ کی بد انتظامی اور مجرمانہ غفلت کے نتیجہ میں ماہ صیام روزہ داروں کیلئے رحمت کی بجائے زحمت بنادیا جاتا ہے اور مٹھی بھر گرانفروش روزداروں کا استحصال کریں گے اورماہ صیا م سے قبل ہی عوام کو لوٹنے کیلئے اپنی سرگرمیاں شروع کر دی ہیں جسکے اثرات نظر آنا شروع ہوگئے ہیں اور اشیاء خردونوش کی قیمتوں میں انتہائی حدتک اضافہ دیکھنے کو مل رہا ہے جو پرائز کنٹرول اتھارٹی کا وجود اور اس کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے سیاسی وسماجی حلقوں نے ڈپٹی کمشنر قصور سے نوٹس لینے کامطالبہ کیا ہے کہ اشیاء خردونوش کی پرائز کنٹرول کرکے ماہ مقدس میں عوام کو ریلیف دیا جائے ۔