جماعت اسلامی کے تحت ’’کراچی یوتھ کنونشن ‘‘ کل باغ جناح میں ہوگا ، تیاریاں و انتظامات مکمل

نوجوان ہی کراچی کے اصل وارث اور متبادل قیادت ہیں ،ْ نوجوانوں کو آگے لائیں گے ۔ حافظ نعیم الرحمن کا ریلی اور جلسے سے خطاب

ہفتہ مئی 21:52

جماعت اسلامی کے تحت ’’کراچی یوتھ کنونشن ‘‘ کل باغ جناح میں ہوگا ، ..
کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 05 مئی2018ء) جماعت اسلامی کراچی کے تحت اتوار6مئی کو شام 7بجے باغ جناح نزد مزارِ قائد میں عظیم الشان ’’کراچی یوتھ کنونشن ‘‘ منعقد ہوگا۔ کنونشن سے امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق خصوصی خطاب کریں گے اور کراچی یوتھ الیکشن میں منتخب ہونے والے یوسی چیئرمین ، وائس چیئرمین و دیگر عہدیداران اور جے آئی یوتھ کے ممبران سے حلف لیں گے ، کنونشن میں نومنتخب لیڈر شپ کو گراس روٹ لیول پر عوامی مسائل کے حل اور مختلف سرگرمیوں کے حوالے سے آئندہ کا لائحہ عمل اور لائین آف ایکشن دی جائے گی۔

باغ جناح میں کنونشن کی تمام تیاریوں اور انتظامات کو حتمی شکل دے دی گئی ہے اور شہر بھر سے ہزاروں کی تعداد میں نوجوان کی شرکت کو یقینی بنانے کے لیے منصوبہ بندی مکمل کرلی گئی ہے ، کنونشن کے لیے بڑے پیمانے پر تیاریاں اور انتظامات کیے گئے ہیں ، شہر بھر سے نوجوان قافلوں، جلوسوں اور ریلیوں کی شکل میں باغ جناح گراؤنڈ میں پہنچیں گے ۔

(جاری ہے)

باغ جناح کے وسیع و عریض گراؤنڈ میں ایک بہت بڑا اسٹیج تیار کیا گیا ہے ، گراؤنڈ کے مرکزی دروازے پر استقبالیہ کیمپ اور سیکورٹی کے پیش نظر واک تھروگیٹ لگائے گئے ہیں ، کار پارکنگ کے لیے بھی خصوصی انتظام کیا گیا ہے اور کنونشن کی سیکورٹی اور باغ جناح کے اطراف میں ٹریفک کنٹرو ل کرنے کے لیے سینکڑوں نوجوانوں کی ذمہ داری لگائی گئی ہے ۔

،صحافیوں کے لیے علیحدہ انکلوژر بنایا گیا ہے اور سوشل میڈیا کے لیے بھی کیمپ لگایا گیا ہے ۔ توقع ہے کہ کنونشن کراچی کی تاریخ میں نوجوانوں کا سب سے بڑا اور تاریخی کنونشن ثابت ہوگا اور نوجوان کراچی کے اندر متبادل قیادت کی صورت میں سامنے آئیں گے ۔ دریں اثناء کنونشن کی تیاریوں اور رابطہ مہم کے سلسلے میں شہر بھر میں اہم پبلک مقامات ، شاہراؤں اور چورنگیوں پر کیمپ لگائے گئے جہاں سے نوجوانوں کو کنونشن میں شرکت کی دعوت دی جارہی ہے ، کیمپوں پر مختلف نظمیں اور ترانے بجائے جا رہے ۔

علاوہ ازیں تمام اضلاع میں مشعل برادر ریلیاں نکالی گئیں اور ریلیوں میں بڑی تعداد میں نوجوانوں نے شرکت کی ۔نوجوانوں کے اندر زبردست جوش وخروش دیکھنے میں آیا ، مشعل برادر ریلیاں رات گئے تک جاری رہیں گی جبکہ اور بہت سے نوجوان باغ جناح بھی پہنچ گئے اور باغ جناح میں زبردست گہما گہمی جاری رہی ۔ امیر جماعت اسلامی حافظ نعیم الرحمن کی قیادت میں مسجد بیت المکرم سے مشعل برادر ریلی نکالی گئی جس نے گلشن اقبال کے مختلف علاقوں میں گشت کیا اور ضیاء الحق کالونی میں اختتام پذیر ہوئی ۔

ریلی میں جماعت اسلامی کراچی کے نائب امیر ڈاکٹر اسامہ رضی ، امیر ضلع شرقی یونس بارائی نے بیت المکرم مسجد پر مشعل برادر ریلی سے خطاب کیا ۔ علاوہ ازیں مچھر کالونی میں بنگالی کمیونیٹی سے وابستہ افراد کا ایک بہت بڑاجلسہ بھی منعقد ہوا جس سے حافظ نعیم الرحمن ،امیر ضلع غربی عبد الرزاق خان اور دیگر رہنماؤں نے خطاب کیا ۔ جلسے میں نوجوان سمیت مختلف برادریوں سے وابستہ افراد کی بڑی تعداد نے جماعت اسلامی میں شمولیت اختیار کی۔

حافظ نعیم الرحمن نے مشعل بردار ریلی اور جلسہ عا م سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ نوجوان ہی کراچی کے اصل وارث اور اسلام اور پاکستان کے محافظ ہیں ، کراچی کے نوجوان ہی کراچی کی متبادل قیاد ت ہیں ، جماعت اسلامی نے نوجوانوں کو نچلی سطح پر اور گراس روٹ لیول پر منظم اور متحرک اور متحد کرنے اور یوتھ لیڈر شپ کو آگے لانے کا فیصلہ کیا ہے ۔ تمام جماعتوں نے نوجوانوں کو نظر انداز کیا ۔

لسانیت و عصبیت کی سیاست نے سب سے زیادہ کراچی کے نوجوانوں کو متاثر کیا اور ان کو تباہ و بربادکر کے رکھ دیا ۔ جماعت اسلامی نوجوانوں کو درست سمیت اور مثبت لائحہ عمل دے گی اور نوجوانوں کی طاقت اور قوت کو صحت مند سرگرمیوں اورعوامی مسائل کے حل کی جدوجہد میں شامل کرے گی ۔ اس لیے گزشتہ ماہ شہر بھرمیں یوتھ الیکشن کا انعقاد کرایا گیا جس کے نتیجے میں نئی یوتھ لیڈر شپ سامنے آئی ہے یہ لیڈر شپ کراچی کے عوامی مسائل کے حل میں اپنا بھرپور کرداراداکرے گی ۔ یوتھ کنونشن اس عمل کا نکتہ آغاز ہوگا اور یہ یوتھ لیڈر شپ ثابت کرے گی کہ کراچی کے نوجوان باصلاحیت ہیں اور حالات کا دھارا بدلنے کی پوری صلاحیت رکھتے ہیں ۔