فرانسیسی صدر کے خلاف متوقع مظاہرہ،دوہزار اضافی پولیس اہلکارتعینات

عالمی یوم مزدوکے موقع پر پرتشدد مظاہروں میں ملوث سات افراد پرفرد جرم عائد کر دی گئی

اتوار مئی 14:30

پیرس(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 06 مئی2018ء) فرانسیسی دارالحکومت پیرس میں سلامتی کو یقینی بنانے کے لیے دو ہزار اضافی پولیس اہلکاروں کو تعینات کر دیا گیا ہے۔ادھر پیرس میں یکم مئی کو عالمی یوم محنت کے موقع پر پرتشدد مظاہرے کیے گئے تھے۔

(جاری ہے)

پولیس نے ان مظاہروں میں گرفتار کیے گئے سات افراد پر کاریں نذر آتش کرنے اور ہنگامہ آرائی کی فرد جرم عائد کر دی ہے۔۔جرمن ریڈیو کے مطابق یہ تعیناتی صدر ایمانوئل ماکروں کی صدارت کا پہلا سال مکمل ہونے پر کیے گئے احتجاج کے تناظر میں کی گئی ہے۔ پیرس میں یکم مئی کو عالمی یوم محنت کے موقع پر پرتشدد مظاہرے کیے گئے تھے۔ پولیس نے ان مظاہروں میں گرفتار کیے گئے سات افراد پر کاریں نذر آتش کرنے اور ہنگامہ آرائی کی فرد جرم عائد کر دی ہے۔

متعلقہ عنوان :