امریکا کے ساتھ تجارتی کشیدگی،چین کا سویابین کی پیداوار میں اضافے کے لیے ہنگامی مہم کا آغاز

اتوار مئی 15:20

بیجنگ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 06 مئی2018ء) چین نے امریکا کے ساتھ تجارتی کشیدگی کے باعث سویابین کی پیداوار میں اضافے کے لیے ہنگامی مہم کا آغاز کردیا۔

(جاری ہے)

ذرائع ابلاغ کے مطابق چین دنیا بھر میں سویابین کا سب سے بڑا درآمد کنندہ اور صارف ملک ہے جس کی زیادہ تر سویابین کی درآمد امریکا سے ہوتی ہے تاہم صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ساتھ تجارتی کشیدگی کے باعث اس کی سویابین کی درآمد متبادل ملکوں سے جاری ہے، چینی حکام نے اس حوالے سے ایک ہنگامی مہم کا آغاز کیا ہے جس کے ذریعے ملک میں سویابین کی پیداوار میں اضافہ کرنے کی کوشش کی جائے گی تاکہ اس جنس کے حوالے سے کسی بھی ملک پر انحصار کم سے کم کیا جاسکے۔

انھوں نے بتایا کہ گزشتہ روز دو شمال مشرقی صوبوں ہیلونگ جیانگ اور جیلن کے حکام کی تفصیلی ملاقات ہوئی جس کے دوران اندرون ملک سویابین کی پیداوار میں فوری اضافے کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا گیا۔حکام نے سویابین کی پیداوار میں فوری اضافے کے لیے 3 لاکھ 33 ہزار ہیکٹر اضافی رقبے پر سویابین کی فوری کاشت پر زور دیا۔اس کے علاوہ ملک کے مختلف علاقوں میں مکئی اور دوسری اجناس کے زیر کاشت لاکھوں ہیکٹر رقبے کو سویابین کے زیر کاشت لانے کی تجویز بھی پیش کی گئی۔

متعلقہ عنوان :