وزیر داخلہ احسن اقبال پر قاتلانہ حملہ

Fahad Shabbir فہد شبیر اتوار مئی 18:43

وزیر داخلہ احسن اقبال پر قاتلانہ حملہ
ناروال (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔06 مئی 2018ء) وزیر داخلہ احسن اقبال پر حملے کی اطلاع آئی ہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق کنجرور میں پاکستان مسلم لیگ ن کے جلسے میں فائرنگ ہوئی ہے۔اور وزیر داخلہ احسن اقبال پر ناروال میں قاتلہ حملے کی اطلاعات ملی ہیں۔۔احسن اقبال پر جلسے کے دوران نامعلوم افراد نے فائرنگ کی ہے۔۔فائرنگ سے احسن اقبال کے زخمی ہونے کی بھی اطلاعات ہیں۔

احسن اقبال بازو پر گولی لگنے سے زخمی ہوئے ہیں۔۔فائرنگ کرنے والے شخص کو حراست میں لے لیا گیا ہے۔جب کہ احسن اقبال کو لاہور میں ریفر کر دیا گیا ہے۔زرائع کے مطابق وزیر داخلہ احسن اقبال جلسے میں تقریر کے بعداپنی گاڑی کی طرف جا رہے تھے کہ اچانک ان پر فائرنگ کی گئی۔۔فائرنگ کے نتیجے میں احسن اقبال زخمی ہو گئے۔

(جاری ہے)

تاہم احسن اقبال کی حالت خطرے سے باہر ہے۔

یاد رہے کہ اس پہلے بھی پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنماؤں پر حملے کیے جا چکے ہیں۔۔مسلم لیگ ن کے قائد میاں نواز شریف پر لاہور میں جامع نعیمیہ میں جوتے سے حملے کیا گیا تھا جب کہ پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما خواجہ آصف پر بھی ایک تقریب کے دوران اس وقت سیاہی پھینکی گئی جب وہ تقریر کر ہے تھے،اور آج احسن اقبال پر فائرنگ کا واقعہ پیش آیا ہے۔جس کی مخلتف پہلوؤں سے تحقیقات کی جا رہی ہے۔

یاد رہے کہ جب پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنماؤں پر جوتے پھینکنے کے واقعات ہو رہے تھے تو معروف صحافی نے خدشہ ظاہر کیا تھا کہ جوتوں سے بات گولیوں تک جائے گی۔میڈیا رپورٹس کے مطابق احسن اقبال کو پندرہ سے بیس فٹ کے فاصلے سے گولی ماری گئیں۔۔احسن اقبال کو فورا اسپتال متقل کیا گیا جہاں انہیں طبی امداد دی جا رہی ہے اور ڈاکٹرز نے ان کو فوری آپریشن کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔۔احسن اقبال پر فائرنگ کرنے والے کو سیکیورٹی اداروں نے حراست میں لے لیا ہے اور نا معلوم مقام پر منتقل کر دیا ہے۔