جوڈیشل کانفرنس میں دیگر مسائل کی بجائے جوڈیشری کے معیار کو بھی بہتر بنانے پر توجہ دینے کی ضرورت ہے ، وکلاء تنظیمیں

اتوار مئی 20:30

کوئٹہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 06 مئی2018ء) بلوچستان کے وکلاء تنظیموں نے مطالبہ کیا ہے کہ ملک بھر میں کرپشن جوڈیشری میں اعلیٰ عدلیہ اور ما تحت عدالتوں میںججز کی تقرری میں میرٹ کی پامالی اور من پسند افراد کی تعیناتی اور سینئر ججز کو نظرانداز کر تے ہوئے جو نیئر ججز کو تعینات کرنے کی سخت مذمت کر تے ہوئے کہا ہے کہ جوڈیشل کانفرنس میں دیگر مسائل کی بجائے جوڈیشری کے معیار کو بھی بہتر بنانے پر توجہ دینے کی ضرورت ہے ان خیالات کا اظہارر بلوچستان بار کونسل کے وائس چیئرمین حاجی عطاء اللہ لانگو، چیئرمین ایگزیکٹو کمیٹی راعب خان بلیدی ، ممبر بار کونسل محمد سلیم لاشاری اور ملک بھر سے آئے ہوئے وکلاء تنظیموں کے رہنمائوںنے اسلام آباد کے ایک ہوٹل میں اظہار خیال کر تے ہوئے کیا اجلاس میں بار کونسل ملک کے اندر موجودہ جوڈیشل سسٹم میرٹ کی پامالی جوڈیشل کانفرنس میں سندھ بار کونسل کیساتھ چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ کے رویئے اور دیگر مسائل پر تفصیلی بحث کی گئی اور مختلف قراردادیں بھی پاس کی گئی اجلاس میں مشترکہ اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ ملک بھر میں کرپشن جوڈیشری میں اعلیٰ عدلیہ اور ما تحت عدالتوں میںججز کی تقرری میں میرٹ کی پامالی اور من پسند افراد کی تعیناتی اور سینئر ججز کو نظرانداز کر تے ہوئے جو نیئر ججز کو تعینات کرنے کی سخت مذمت کر تے ہوئے کہا ہے کہ جوڈیشل کانفرنس میں دیگر مسائل کی بجائے جوڈیشری کے معیار کو بھی بہتر بنانے پر توجہ دینے کی ضرورت ہے۔