ایک تو خواب لئے پِھرتے ہو گلیوں گلیوں، اُس پہ تکرار بھی کرتے ہوخریدار کے ساتھ

خواجہ سعد رفیق نے احسن اقبال کے لیے ٹویٹر پر شاعری کر ڈالی

Sumaira Faqir Hussain سمیرا فقیرحسین پیر مئی 11:28

ایک تو خواب لئے پِھرتے ہو گلیوں گلیوں، اُس پہ تکرار بھی کرتے ہوخریدار ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 07 مئی 2018ء) : گذشتہ روز وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال پر قاتلانہ حملہ ہو جس کے بعد سے ہی سیاسی حلقوں میں ہلچل پیدا ہو گئی ۔ سیاسی رہنماؤں نے جہاں احسن اقبال پر حملے کی مذمت کی وہیں ن لیگی رہنماؤں نے احسن اقبال سے اظہار یکجہتی کرتے ہوئے ان کی جلد صحتیابی کی دعا بھی کی۔ مائیکروبلاگنگ ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے پیغام میں وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے ایک نظم احسن اقبال کی نذر کر دی ۔

انہوں نے اپنے ٹویٹر پیغام میں لکھا کہ میں یہ نظم احسن اقبال کی نذر کر رہا ہوں۔
یاد رہے کہ گذشتہ روز وفاقی وزیرداخلہ احسن اقبال شکرگڑھ کی تحصیل کنجرورمیں عوامی جلسے سے خطاب کے بعدواپس جارہے تھے کہ ان پرنامعلوم ملزمان نے فائرنگ کردی۔

(جاری ہے)

حملے کے فوری بعد احسن اقبال کے کزن عمران نے بتایا کہ احسن اقبال کے بازو پرگولی لگی ہے۔

جس سے احسن اقبال شدید زخمی ہوگئے ہیں۔ تاہم احسن اقبال کوہسپتال منتقل کیا گیااور احسن اقبال کی حالت خطرے سے باہر ہے۔اور خیریت سے ہیں۔وزیرمملکت برائے داخلہ طلال چوہدری کا کہنا ہے کہ احسن اقبال پرحملہ کرنے والے کی عمر20سے 22سال ہے۔۔حملہ آور کوگرفتار کرلیا گیا ہے، احسن اقبال کی حالت خطرے سے باہر ہے۔۔احسن اقبال کے بلٹ دائیں کندھے کے قریب لگا۔

ڈی پی اوناروال عمران کشور کاکہنا ہے کہ فائرنگ کرنے والا شخص مقامی ہے ،انکوائری جاری ہے۔ ملزم نے 15گز کے فاصلے سے گولی چلائی، وفاقی وزیرداخلہ احسن اقبال نے کہا ہے کہ وہ خیریت سے ہیں،تمام دوستوں اور خیرخواہوں سے گزارش ہے کہ وہ خصوصی دعاؤں میں یاد رکھیں۔انہوں نے قاتلانہ حملے کے بعد اسپتال سے سوشل میڈیا پراپنے پہلے جاری کردہ بیان میں کہاکہ اللہ بزرگ وبرتر بہت مہربان ہے۔کہ وہ خیریت سے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ تمام دوستوں اور خیرخواہوں سے گزارش ہے کہ وہ خصوصی دعاؤں میں یاد رکھیں۔ لاہور کے سروسز اسپتال میں احسن اقبال کا آپریشن کیا گیا، ڈاکٹرز نے  ان کی صحت کو تسلی بخش قرار دیا۔