عام انتخابات میں امیدواروں کی جانچ پڑتال کے عمل کو شفاف بنانے کے لئے نادرا آن لائن سکروٹنی سسٹم کا سافٹ ویئر تیار کرے گا، نیب، ایف بی آر، ایف آئی اے، سٹیٹ بینک اور الیکشن کمیشن کے علاوہ ریٹرننگ افسران اس نظام سے منسلک ہو جائیں گے،الیکشن کمیشن

پیر مئی 15:40

اسلام آباد۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 07 مئی2018ء) الیکشن کمیشن نے عام انتخابات میں امیدواروں کی جانچ پڑتال کے عمل کو شفاف بنانے کے لئے فیصلہ کیا ہے کہ نادرا آن لائن سکروٹنی سسٹم کا سافٹ ویئر تیار کرے گا۔ نیب، ایف بی آر، ایف آئی اے، سٹیٹ بینک اور الیکشن کمیشن کے علاوہ ریٹرننگ افسران اس نظام سے منسلک ہو جائیں گے۔ اس سافٹ ویئر کے ذریعے تمام امیدواروں کے کوائف نادا کو فراہم کئے جائیں گے۔

پیر کو الیکشن کمیشن سیکرٹریٹ میں چیف الیکشن کمشنر جسٹس (ر) سردار محمد رضا کی صدارت میں اہم اجلاس منعقد ہوا جس میں الیکشن کمیشن کے ممبران، سیکرٹری الیکشن کمیشن،، نادرا،، سٹیٹ بینک، ایف بی آر، نیب، پیپکو، سوئی گیس اور ایف آئی اے کے افسران نے شرکت کی۔ اجلاس کا مقصد عام انتخابات 2018ء میں امیدواروں کے کاغذات نامزدگی کی آن لائن جانچ پڑتال کے لئے ایک ایسا نظام تیار کرنا ہے جس کے تحت نیب ایف بی آر، ایف آئی اے، سٹیٹ بینک، الیکشن کمیشن سے لنک ہوں تاکہ امیدواروں سے متعلق ضروری معلومات تمام ریٹرننگ افسران کو مہیا کی جا سکیں۔

(جاری ہے)

اس نظام کا مقصد امیدواروں کی جانچ پڑتال کے عمل کو شفاف بنانا ہے۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ نادرا آن لائن سکروٹنی سسٹم کا سافٹ ویئر تیار کرے گا۔ اس سافٹ ویئر کی الیکشن کمیشن سے منظوری کے بعد نیب، ایف بی آر، ایف آئی اے، سٹیٹ بینک اور الیکشن کمیشن اس نظام سے منسلک ہو جائیں گے ۔اس سافٹ ویئر کے ذریعے تمام امیدواروں کے کوائف نادرا کو فراہم کئے جائیں گے۔ نادرا امیدواروں سے متعلق معلومات الیکشن کمیشن اور دیگر اداروں کو فراہم کرے گا اور تمام ادارے ضروری کارروائی کے بعد امیدواروں سے متعلق معلومات الیکشن کمیشن کو دیں گے اور الیکشن کمیشن یقینی بنائے گا کہ تمام ریٹرننگ افسران کو جانچ پڑتال کے دوران یہ معلومات دستیاب ہوں۔