بھارت،نوجوان لڑکیوں سمیت تین علیحدہ ریپ کیسز میں 22 افراد گرفتار

پولیس نے لڑکی کو اغوا اور ریپ کرنے والے 2 ملزمان کے علاوہ 18 افراد کے خلاف بھی مقدمہ درج کرلیا

پیر مئی 16:42

نئی دہلی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 07 مئی2018ء) مشرقی بھارت میں نوجوان لڑکیوں سمیت تین علیحدہ ریپ کیسز میں 22 افراد گرفتار کرلیے گئے۔۔بھارتی ٹی وی کے مطابق حالیہ ہفتوں میں بچوں کو جنسی طور پر ہراساں کرنے کے واقعات شہہ سرخیوں پر لگنے کے بعد سے ملک بھر میں غم و غصے کی لہر دوڑ پڑی ہے۔مقامی تھانے کے چیف رام سنگھ کا کہنا تھا کہ پولیس نے 14 افراد اور خواتین کو 16 سالہ لڑکی کے ریپ کے کیس میں گرفتار کیا جسے ریپ کرنے کے بعد زندہ جلا دیا گیا تھا۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ بچی کے والد کی جانب سے دیہی کونسل میں شکایت درج کرائی گئی تھی جس پر گاؤں کے بزرگوں نے دو مبینہ قاتلوں کو 50 ہزار روپے جرمانہ اور 100 سٹ اپس کرنے کی سزا سنائی تھی۔ان کا کہنا تھا کہ سزا سے ملزمان مشتعل ہوگئے اور والدین کو پیٹنے کے بعد لڑکی کو آگ لگادی۔انہوں نے مزید بتایا کہ دونوں ملزمان نے والدین کو مارا پیٹا اور اپنے دیگر ساتھیوں کے ہمراہ متاثرہ لڑکی کے گھر پہنچ کر اسے آگا لگادی،،پولیس نے لڑکی کو اغوا اور ریپ کرنے والے 2 ملزمان کے علاوہ 18 افراد کے خلاف بھی مقدمہ درج کرلیا۔

متعلقہ عنوان :