سندھ میں جوائنٹ وینچر کے تحت فرائزین پیسچرائزڈ ایگ پلانٹ لگانا ڈچ کمپنی کا پاکستانی معیشت پر اعتماد کا مظہر ہے، ناہید میمن

پیر مئی 18:32

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 07 مئی2018ء) چیئر پرسن سندھ بورڈ آف انویسٹمنٹ ناھید میمن نے کہا ہے کہ ڈچ کمپنی کی جانب سے بن قاسم کراچی میں جوائنٹ وینچر پارٹنر شپ کے زریعے فرائزین پیسچرائزڈ ایگ پلانٹ لگانا دراصل پاکستانی معیشت پر اعتماد کا مظہر ہے۔ یہ بات انہوں نے پیر کو اپنے دفتر میں برکات فرائزین پیسچرائزڈ ایگ کمپنی اور میزان بنک کے مابین ہونے والے معاھدے کے دستخطوں کی تقریب سے مہمان خصوصی کی حیثیت سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔

معاہدے کے تحت میزان بنک اس منصوبے کے لئے 12.5 کروڑ روپے قرضہ دے گا۔جبکہ اپنے فرائزین پیسچرائزڈ ایگ پلانٹ کے لئے 10 کروڑ روپے برکات کمپنی خود لگائے گی اور اس منصوبے کے لئے 7.5کروڑ روپے ڈچ گورنمنٹ دے گی۔جبکہ سندھ انٹر پرائز ڈیولپمنٹ فنڈ SEDF قرضے پر کائی بور KIBOR سبسڈی جوکہ تقریبا 20 ملین بنتی ہے ادا کرے گا۔

(جاری ہے)

ناھید میمن نے کہا کہ ھالینڈ کی کمپنی کے ساتھ سندھ کی کمپنی کے اس جوائنٹ وینچر سے صوبے میں جدید ٹیکنالوجی آئے گی،پولٹری انڈسٹری کو فائدہ ھوگا اور روزگار کے مواقع پیدا ھونگے۔

اس موقع پر بریفنگ کے دوران بتایا گیا کہ ھالینڈ کے تعاون سے بن قاسم میں لگنے والے فرائزین پیسچرائزڈ ایگ پلانٹ میں انڈے کی زردی اور سفیدی کو الگ الگ کر کے پیکنگ میں تین ھفتے سے لیکر ایک سال کی مدت تک محفوظ رکھا جاسکے گا جبکہ انڈے سے حاصل ہونے والے چھلکے اور جھلی کو فارما سیوٹیکل اور کاسمیٹکس انڈسٹری میں استعمال کر کے مزید مالی فائدہ حاصل کیا جاسکے گا۔

اس موقع پر چیئر پرسن ایس بی آئی ناہید میمن نے کہا کہ فرائزین پیسچرائزڈ ایگ پلانٹ کے لگنے سے سندھ میں پولٹری صنعت کو بہت فائدہ ھوگا۔ تقریب میں سندھ حکومت کے محکمہ خوراک،محکمہ صنعت،محکمہ لائیو اسٹاک،جبکہ این ائی پی میزان بنک،،ڈچ فرائزین پیسچرائزڈ ایگ کمپنی کے افسران،برکات فرائزین پیسچرائزڈ ایگ کمپنی کے افسران اور سندھ انٹر پرائزڈ ڈیولپمنٹ فنڈ کے چیف ایگزیکیٹو افسر محبوب الحق بھی موجود تھے۔