حیدرآباد،گورنمنٹ بوائز کمپری ہنسیوہائر سیکنڈری اسکول کو جدید سہولیات سے آراستہ کر دیا گیا

پیر مئی 18:57

حیدرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 07 مئی2018ء) معروف سماجی تنظیم ادارہ تعلیم و آگاہی نے فلپ مورس((پاکستان))لمیٹڈ کے تعاون سے کوٹری کے سب سے بڑے گورنمنٹ بوائز کمپری ہنسیوہائر سیکنڈری سکول کو ایک وسیع پروگرام کے تحت جدید سہولیات سے آراستہ کر دیا ہے۔اس سے 1,900سے زائدطلباء کو بہترین ماحول میسر ہوا ہے جس سے وہ اپنی تمام تر توجہ تعلیم کے حصول پر پر کوز کر سکتے ہیں۔

ان سہولیات میں سب سے اہم اسکول کو شمسی توانائی پر منتقل کرنا ہے جس کے تحت جدید ترین سولر پینلز لگائے گئے ہیں۔ اس سے اسکول کے اخراجات میں محض بجلی کے بل کی مد میں 70فیصد تک کمی آئے گی اور یہ رقم طلباء کی فلاح پر خرچ کی جا سکے گی۔اس کے علاوہ اسکول میں طلباء کی بڑھتی ہوئی تعداد کے پیش نظرپہلے سے قائم تمام 14 بیت الخلاء کو قابل استعمال بنا دیا گیا ہے۔

(جاری ہے)

اس پروگرام کے آغاز سے قبل کل 19بیت الخلاء میں سے قابل استعمال کی تعداد5 تھی۔گزشتہ روز اس پروگرام کی کامیاب تکمیل کے موقع پر اسکول میں ایک رنگا رنگ لٹریچر فیسٹیول کا اہتمام کیا گیا جس میں طلباء کی دلچسپی کو مدنظر رکھتے ہوئے خصوصی پروگرامز ترتیب دیے گئے۔فیسٹیول سے خطاب کرتے ہوئے ادارہ تعلیم و آگاہی کی سی ای او بیلا رضا نے کہا کہ ہمارے بچے پاکستان کا مستقبل ہیں۔

انہیں بہترین تعلیم کی فراہمی سے ہی ترقی یافتہ پاکستان کا خواب شرمندہ تعبیر ہو سکتا ہے۔اسی لیے ہم نے اس اسکول کو ایک جامع پروگرام کے تحت اپ گریڈ کیا ہے تاکہ یہ بچے بلا تعطل تعلیم کے حصول کو جاری رکھ سکیں اورپاکستان کی ترقی میں اپنا کردار ادا کر سکیں۔ انھوں نے فلپ مورس ((پاکستان)) لمیٹڈ کے تعاون کا شکریہ ادا کرتے ہوئے اس عزم کا اظہار کیا کہ ان کا ادارہ اپنے پارٹنرز کے اشتراک سے ملک کے دیگر شہروں میں بھی ایسی سہولیات کی فراہمی کے دائرے کو وسیع کریں گے۔

اپنے خطاب میںا سکول کے وائس پرنسپل اسماعیل رعنا کا کہنا تھا کہ اس پروگرام سے ہمارے بچوں کو صاف ستھرا ماحول میسر ہو گاجس سے ان کی صحت بہتر رہے گی اور سکول میںان کی حاضری بڑھے گی۔بہتر مستقبل کیلئے ہمیں اس سلسلے کو جاری رکھنا ہو گا۔ فیسٹیول میں طلباء نے تھیئٹر پلے، ٹیبلو اور میوزک سمیت متعدد لائیو پرفارمنس دیں جسے حاضرین نے بے حد سراہا۔ فیسٹیول میں ممبر سندھ اسمبلی شبیر قائم خانی نے بھی شرکت کی اور طلباء کی پرفارمنس کو سراہا۔ انھوں نے بھی تنظیم کی کاوشوں کو سراہا اور اس سلسلے کو جاری رکھنے پر زور دیا۔