لاڑکانہ ،ْ16سالہ طالبہ کو گرفتار کرنے پر ایس ایچ او عبدالغفار رند کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم

پیر مئی 20:03

لاڑکانہ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 07 مئی2018ء) ایک روز قبل قدیمی تہذیبی مقام موہن جو دڑو اپنے والدین اور دیگر ورثا کے ہمراہ گھومنے آئی ہوئی 16 سالہ طالبہ عروسہ مگریو کو ایئرپورٹ تھانہ پولیس کی جانب سے شناخی کارڈ کے بہانے گرفتار کیا تھا جسے گذشتہ روز وومن تھانہ پولیس نے مقامی عدالت میں پیش کیا جہاں طالبہ کے بیان کے بعد عدالت نے ایئرپورٹ تھانہ کے ایس ایچ او عبدالغفار رند پر مقدمہ درج کرنے اور طالبہ کو رہا کرنے کے احکامات جاری کیے ہیں۔

(جاری ہے)

واضع رہے کہ اتوار کے روز طالبہ عروسہ اپنے والد، والدہ، بہنوں اور دیگر رشتہ داروں کے ہمراہ قدیمی تہذیبی مقام موہن جو دڑو گھومنے گئے جہاں ایئرپورٹ تھانہ پولیس کی جانب سے طالبہ کی شناختی کارڈ طلب کرنے کا بہانہ بناکر اسے حبس بے جا میں رکھ کر بعد میں وومن تھانہ پولیس کے حوالے کیا جہاں انہیں بعد میں عدالت پیش کیا گیا۔

متعلقہ عنوان :