ایف پی سی سی آئی آج وزیر اعظم اور وزیر خزانہ کو حالیہ بجٹ میں پا ئی جانی والی مشکلا ت سے آگاہ کر ے گی

پیر مئی 20:57

ایف پی سی سی آئی آج وزیر اعظم اور وزیر خزانہ کو حالیہ بجٹ میں پا ئی ..
کرا چی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 07 مئی2018ء) فیڈریشن آف پاکستان چیمبرز آف کامرس اینڈ انڈسٹر ی (FPCCI) کا وفد صدر غضنفر بلور اور سنیئر نائب صدر سید مظہر علی نا صر کی سر براہی میں منگل 8مئی(آج) وزیر اعظم پاکستان شاہد خاقان عباسی اور وزیر خزانہ ڈاکٹر مفتا ح اسما عیل سے ملا قا ت کر کے حالیہ 2018-19 قو می بجٹ سے متعلق مختلف مسائل اور مشکلات سے آگا ہ کر ے گا اور فنانس بل 2018میں ان خامیوں کو جلددور کرنے پر زور دے گا۔

ان مسائل کو بیان کرتے ہو ئے چیئر مین بجٹ ایڈ وائز ی کو نسل سید مظہر علی ناصر نے حکومت پر زور دیتے ہو ئے کہاکہ GIDCسے متعلق پرانے معاملا ت کو جلد حل کیا جا ئے اور پرانے جمع شدہ GIDCرقوم کو بھی مو جو دہ مد ت ختم ہو نے سے پہلے حل کیا جا ئے۔ انہوں نے اس بات پر زور دیتے ہو کہاکہ Further Taxسیلز ٹیکس غیر رجسٹرڈلو گو ں پر 3فیصد سے 1فیصد کیا جا ئے۔

(جاری ہے)

سید مظہر علی نا صر نے یہ بھی تجو یز پیش کی ہے کہ فا ئنل ٹیکس FTRمیں کمر شل امپو رٹر کی حیثیت کو بحال کر تے ہو ئے ٹیکس امپو رٹ اسٹیج پر 6فیصد کی شر ح سے سیکشن 143(B)آف انکم ٹیکس ITO 2001 کے تحت مکمل اور فائنل قرار دیا جا ئے۔

ری فنڈ سے متعلق مسائل پر مظہر علی نا صر نے حکو مت پر زور دیتے ہو ئے کہاکہ حکو مت کو تمام جمع شدہ ری فنڈ کلیم کی ادائیگی کو بشمو ل فیڈرل اور لو کل ٹیکسز اور ڈیو ٹی تین مہینو ں کے دوران ادائیگی کو یقینی بنا ئے جا ئے تا کہ ایکسپورٹر کو مکمل دیوالیہ سے پچا یا جا ئے۔ سید مظہر نا صر نے مزید بتا یا کہ سر کلر 14 6 #اکتو بر2011 میں پیش آئی تمام مشکلا ت کو دور کر نے کی در خواست بھی پیش کر ے گی جس میں یہ کہا گیا ہے جو صنعتی یو نٹ خیبر پختونخوا کے متا ثر ہ ایریا ز میں واقع ہیں اور ان کی سیلز متا ثر ہ علا قو ں سے با ہر ہو تی ہے وہ انکم ٹیکس سے مستثنی نہیں ہو گی مگر جب یو نٹس متا ثرہ علاقوں سے با ہر اور Salesبھی متا ثرہ علاقو ں سے با ہر ہو گی تب ہی وہ انکم ٹیکس سے مستثنی ہو گی اس طر یقہ کا ر سے آپس میں بے دلی اورصو بہ کے تا جر وں میں ابہام پیدا ہو گا۔

#