شہر میں تجاوزات کیخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے‘ کمشنر کوئٹہ ڈیژن

شورومز سے باہر سٹرک پر گاڑی کھڑی کرنے پر بھاری جرمانہ اور گاڑی بھی بند کیا جائیگی،جاوید انورشاہوانی

پیر مئی 21:54

کوئٹہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 07 مئی2018ء) کمشنر کو ئٹہ ڈویژن جاوید انور شاہوانی نے کہا ہے کہ شہر میں تجاوزات کے خلاف سخت کاروائی عمل میں لائی جائے،دکانوں کے سامنے موجود سازو سامان اور فٹ پاتھوں پر کاروبار کر نے کی اجازت نہیں ہو گئی ،شورومز سے باہر سٹرک پر گاڑی کھڑی کرنے پر بھاری جرمانہ اور گاڑی بند کیا جائے ۔ وہ پیر کو شہر میں تجاوزات اور ٹریفک کی بہتری کے حوالے سے منعقدہ اجلاس سے خطاب کر رہے تھے۔

اجلاس میں ایس ایس پی ٹریفک کوئٹہ ، اسسٹنٹ کمشنر ریونیو کوئٹہ ڈویژن، ڈی ایس پی ٹریفک سٹی جاوید احمد ،ڈی ایس پی زبیر احمد کے علاوہ میٹروپولیٹن کارپوریشن اور دیگر متعلقہ محکموں کے آفسیران اور نمائندے بھی موجود تھے ۔کمشنر کوئٹہ ڈویژن نے کہا کہ شہر میں ٹریفک کی روانی کو مزید بہتر اور پیدل چلنے والوں کی وسہولت کیلئے تجاوزات کو خاتمہ ناگزیر ہے اس سلسلے میں شہر کی مختلف شاہراہوں پر قائم تجاوزات کے خاتمے کیلئے خصوصی اقدامات کیے جائیں۔

(جاری ہے)

اس سلسلے میں میٹروپولیٹن اور انتظامیہ پولیس ،لیویز اور ایف سی کے تعاون سے روزانہ کی بنیاد پر تجاوزات کا خاتمہ کریں ۔انہوں نے کہا کہ ہائی کورٹ کے حکم پر شوروم مالکان کیخلاف بھی سخت کاروائی عمل میں لاتے ہوئے ان کے شورومز بند اور بھاری جرمانے عائد کیے جائیں اس کے علاوہ جوائنٹ روڈ ،سریاب روڈ اور دیگر علاقوں میں ریڑھی بانوں کیلئے مخصوص جگہیں آلاٹ کی جائیں سٹرک پر ریڑھی کھڑی کرنے والوں اور خرید وفروخت کرنے والوں کے خلاف بھی سخت کاروائی کی جائے ۔

انہوں نے کہا نوپارکنگ اور غلط پارکنگ کرنے والوں کیخلاف سخت اقدامات کرتے ہوئے بھاری جرمانے عائد کیے جائیں اور گاڑیوں کو بند کیا جائے ۔انہوں نے کہا غیر کانونی سائیکل وموٹر سائیکل اسٹینڈز اور ہوٹلوں کے سامنے گاڑیاں ،رکشہ اور موٹر سائیکلیں کھڑی کرنے والوں کے خلاف بھی سخت کاروائیاں کی جائیں ۔انہوں نے مزید کہا شہر کی تمام شاہراہوں پر پیلی لائن آویزاں کی جائیں اس سلسلے میں ایک ہفتے میں کا م شروع کیا جائے ۔انہوں نے کہا کہ ٹریفک پولیس کی نفری میں اضافہ اور مراعات کیلئے بھی اقدامات کئے جائیںگے ۔