حافظ آباد،ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج عزیز اللہ کلو کاڈسٹرکٹ جیل کا اچانک دورہ

دورے کا مقصد چیف جسٹس کے حکم کے تحت جیل میں قیدیوں کی حالت اور انہیں فراہم کی جانے والی بنیادی سہولیات کا جائزہ لینا تھا

پیر مئی 22:50

حافظ آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 07 مئی2018ء) چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار کے حکم پر ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج حافظ آباد عزیز اللہ کلو نے گزشتہ روز ڈسٹرکٹ جیل حافظ آباد کا اچانک دورہ کیا۔سینئر سول جج ایڈمن عامر شہزاد ،سینئر سپرنٹنڈنٹ جیل محمد یعقوب جوڑا،سپرنٹنڈنٹ سیشن جج واجد علی ،،جیل افسران بھی انکے ہمراہ تھے۔اس دورے کا مقصد چیف جسٹس کے حکم کے تحت جیل میں قیدیوں کی حالت اور انہیں فراہم کی جانے والی بنیادی سہولیات کا جائزہ لینا تھا۔

سیشن جج نے بتایا کہ قیدیوں کو جیل قوانین کے تحت بنیادی سہولیات کی فراہمی جیل انتظامیہ کی ذمہ داری ہے جسمیں کوتاہی برداشت نہیں کی جائیگی۔انہوں نے کہا کہ بنیادی انسانی حقوق کا تحفظ ریاستی اداروں کا فرض ہے اور چیف جسٹس کے حکم ان دوروں کا مقصد جیل کے حالات کا خود جائزہ لینا اور جہاں ضرورت ہو وہاں صورتحال کی بہتری کو یقینی بنانا ہے۔

(جاری ہے)

جیل سپرنٹنڈنٹ محمد یعقوب جوڑا نے سیشن جج کو جیل میں فراہم کی جانے والی سہولیات قیدیوں اور دیگر انتظامی معاملات کے حوالہ سے بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ قیدیوں کی اخلاقی اور ذہنی تربیت کے لیے خصوصی انتظام کیا گیا ہے تاکہ جرائم پیشہ عناصر کی ذہنی اصلاح ہو سکے اور وہ رہائی کے بعد پر امن ،قانون پسند شہری بن کر زندگی گزار سکیں۔سیشن جج نے مختلف بارکوں ،،جیل ہسپتال ،کچن ،خواتین وارڈ کا دورہ کیا اور قیدیوں سے انکے مسائل معلوم کیے۔

متعلقہ عنوان :