انتہا پسندی ملک کے لیے سب سے بڑا خطرہ اور عدم برداشت تباہی ہے،

ذاتی ایجنڈے ایک طرف رکھ کر ملک و قوم کے لیے مل بیٹھنے کی ضرورت ہے، سابق وزیر خارجہ خواجہ محمد آصف کی نجی ٹی وی چینل سے گفتگو

پیر مئی 23:19

انتہا پسندی ملک کے لیے سب سے بڑا خطرہ اور عدم برداشت تباہی ہے،
اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 07 مئی2018ء) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے سینیئر رہنما و سابق وزیر خارجہ خواجہ محمد آصف نے کہا ہے کہ انتہا پسندی ملک کے لیے سب سے بڑا خطرہ اور عدم برداشت تباہی ہے لہٰذا ملک کے لیے ایک ساتھ مل بیٹھنے کا وقت ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پیر کو ایک نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ ہم سب کو اپنے ذاتی ایجنڈے ایک طرف رکھ کر ملک و قوم کے لیے مل بیٹھنے کی ضرورت ہے۔

ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ مشرف کے اقدامات کا خمیازہ قوم نے بھگتا۔ ایک اور سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ آصف زرداری سے قریبی تعلقات رہے، آصف علی زرداری اپنے ذاتی مفادات کا تحفظ کرتے ہیں اپنی جماعت کا نہیں لیکن اب ذاتی مفادات کو ایک طرف رکھنے کا وقت آ چکا ہے۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ پاکستان مسلم لیگ (ن) نے ہمیشہ عوامی خدمت کی سیاست کو ترجیح دی ہے،یہی وجہ ہے کہ جب بھی پاکستان مسلم لیگ (ن) اقتدار میں آئی ملک و قوم نے ترقی کی۔

انہوں نے کہا کہ 2013ء میں بھی جب پاکستان مسلم لیگ (ن) نے اقتدار سنبھالا تو ملکی معیشت کے دیوالیہ ہونے کی باتیں کی جا رہی تھیں،ملک بھر میں دہشت گردی کا بھی زور تھا،روزانہ 18,18 گھنٹے کی لوڈ شیڈنگ ہوتی تھی لیکن ہماری قیادت نے اقتدار سنبھالتے ہی نہ صرف ملکی معیشت کے استحکام کے لیے کام کیا بلکہ دہشت گردی اور لوڈ شیڈنگ کے خاتمے کے لیے بھی موثر و ٹھوس اقدامات اٹھائے جن کی بدولت آج ملکی معیشت بھی مستحکم ہو رہی ہے اور دہشت گردی اور لوڈ شیڈنگ کا بھی کافی حد تک خاتمہ کیا جا چکا ہے جو پاکستان مسلم لیگ (ن) کی حکومت کی موثر و کارآمد پالیسیوں کا منہ بولتا ثبوت ہے۔