1990ء میں بے نظیر حکومت کی برطرفی کی اصل وجوہات سامنے آ گئیں

پاک فوج نے یورینیم کی افزودگی میں ریڈ لائن کو پار کیا ہے جو بڑی طاقتوں کے لئے قابل قبول نہیں،بے نظیر کا بیان

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان منگل مئی 13:35

1990ء میں بے نظیر حکومت کی برطرفی کی اصل وجوہات سامنے آ گئیں
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 08 مئی2018ء) قومی اخبار کی ایک رپورٹ کے مطابق 1990ء میں شہید محترمہ بے نظیر بھٹو کی حکومت کی برطرفی کی بڑی وجوہات میں سے ایک وجہ ان کا عوامی سطح پر ایک بیان دینا تھا۔جس بیان میں شہید محترمہ بے نظیر بھٹو کہتی ہیں کہ پاک فوج نے یورینیم کی افزودگی میں اس ریڈ لائن کو پار کیا ہے ۔جو بڑی طاقتوں کے لیے قابل قبول نہیں۔

اس بات کا انکشاف سندھ میں ایم آئی کے سابق چیف بریگیڈئیر(ر) حامد سعید اختر نے قومی اخبار سے گفتگو کے دوران کیا۔ سابق چیف بریگیڈئیر(ر) حامد سعید اختر بتایا کہ بظاہر بھاری کرپشن اور کراچی میں پولیس آپریشن بھی شہید محترمہ بے نظیر بھٹو کی حکومت کی برطرفی کی بڑی وجوہات تھیں۔ مگر پی پی لیڈر کی حکومت کی سابق صدر غلام اسحاق خان کے ہاتھوں برطرفی کی بعض دیگر وجوہات بھی تھیں۔

(جاری ہے)

جن کو میں ظاہر نہیں کر سکتا۔ان کا کہنا تھا کہ شہید محترمہ بے نظیر بھٹو نے ایک بیان دیا کہ پاک فوج نے یورینیم کی افزودگی میں ریڈ لائن کو پار کیا ہے ۔رپورٹ میں یہ بھی لکھا گیا ہے کہ 1990 میں جب کراچی کے حالات بہت خراب تھے.اور پکا قلعہ حیدر آباد میں آباد مہاجر آبادی کے خلاف اس روز پولیس آپریشن شروع کیا جس روز وزیر اعظم‘ چیف آف آرمی سٹاف اور کورکمانڈر بیرون ملک دورے پر تھے۔

اس آپریشن میں متعدد ہلاکتیں ہوتی تھیں۔تب پاکستان واپسی پر وزیراعظم بینظیر بھٹو نے پریس میں بیان دیا کہ فوج نے مہاجروں کو پی او ایف میں تیار شدہ ہتھیار فراہم کئے..پولیس نے یہ ہتھیار برآمد کرنے کیلئے پکا قلعہ کا گھیرائو کیا، جب پولیس فورس اس ذخیر ے تک پہنچنے والی تھی تو فوج کود پڑی اور فوجی گاڑیوں میں ہتھیار اٹھا کر لے گئے،۔اس بیان سے ہر ایک کو سخت صدمہ ہوا۔

جو بڑی طاقتوں کے لیے قابل قبول نہیں۔انہوں نے ایک ا نٹرویو میں خالصتان تحریک کچلنے کیلئے بھارت کی حمایت کا اظہار کیا۔کچھ دن بعد وزیراعظم نے ان کی مشاورت کے بعد سندھ میں سالانہ مشقوں پر فوج پر تنقید کی۔جس کے بعد آئی ایس پی آر کو وضا حت دینا پڑی کہ قانون کے مطابق آرمی چیف کو ملک کے کسی حصے میں تربیتی مشقوں کیلئے کسی سے اجازت لینے کے ضرورت نہیں ہے۔۔