کمشنر کراچی آپے سے باہر ہوگئے، میڈیا نمائندوں کو کانفرنس روم سے باہر نکال دیا

ْاعجاز احمد خان نے میڈیا نمائندوں سے بدتمیزی کرتے ہوئے انہیں زبردستی اپنے آفس سے نکال دیا

منگل مئی 18:41

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 08 مئی2018ء) کمشنر کراچی اعجاز احمد خان آپے سے باہر ہوگئے، میڈیا نمائندوں کو کانفرنس روم سے باہر نکال دیا۔ تفصیلات کے مطابق کمشنر کراچی اس وقت آپے سے باہر ہوگئے جب میڈیا نمائندے کمشنر آفیس میں پی ٹی آئی رہنماں کا انتظار کررہے تھے کمشنر کراچی نے میڈیا کے نمائندوں اور اپنے اسٹاف کو مغلظات بھی بکیں میڈیا نمائندے پی ٹی آئی رہنماں کی دعوت پر کمشنر آفیس کے کانفرنس روم میں موجود تھے میڈیا نمائندے پی ٹی آئی وفد کی حکیم سعید گرانڈ میں بارہ مئی کو جلسے کی اجازت کے حوالے سے کمشنر کراچی سے ملاقات کی کوریج کے لئے آئے تھے۔

جہاں اعجاز احمد خان نے میڈیا نمائندوں سے بدتمیزی کرتے ہوئے انہیں زبردستی اپنے آفس سے نکال دیا۔کمشنر کراچی نے ملازمین کو کہا کہ تم دنیا کے بیوقوف ترین آدمی ہو۔

(جاری ہے)

تمھاری ہمت کیسے ہوئی میرے کانفرنس روم میں میڈیا کو بٹھانے کی۔یہاں کوئی سیاسی جماعت نہیں آرہی نہ ہی میں نے کسی کو بلایا ہے۔میڈیا نمائندے میرے کانفرنس روم میں مت بیٹھیں۔کمشنر کراچی نے انتہائی غیر سنجیدگی کا مظاہرہ کیا اور گزشتہ روز پی ٹی آئی اور پیپلزپارٹی کے کارکنان کے درمیان جھگڑے کے بعد پیدا ہونے والی کشیدہ صورتحال پر قابو ہانگ کے لئے پی ٹی آئی رہنماوں سے ہونے والے مزاکرات سے لاعلمی کا اظہار کیا اعجاز احمد خان کے ہتک آمیز روئیے کے خلاف صحافیوں نے کمشنر آفیس کے سامنے شدید احتجاج کیا اور نعرے بھی لگائے صحافیوں نے وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ سے کمشنر کراچی کے نازیبا روئیے پر انکے خلاف تادیبی کارروائی کا مطالبہ کیا۔

میڈیا سے غیر رسمی گفتگو میں کمشنر کراچی اعجاز احمد خان کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی سمیت کسی سیاسی جماعت کو کمشنرہاس طلب نہیں کیا گیا۔۔پی ٹی آئی شوق سے آئے سڑک پر اپنا پروگرام کریں، باہر بات کریں۔۔جلسہ کرنے کا معاملہ دو سیاسی جماعتوں کا ہے میرا اس سے کوئی تعلق نہیں۔