سندھ مدرسہ یونیورسٹی کے تحت پہلی عالمی مینجمینٹ، بزنس اور لیڈرشپ کانفرنس جمعرات سے شروع ہوگی

منگل مئی 22:04

ْکراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 08 مئی2018ء) سندھ مدرستہ الاسلام یونیورسٹی کے شعبہ بزنس ایڈمنسٹریشن کے تحت -’’مینجمینٹ، بزنس اینڈ لیڈرشپ ‘‘کے موضوع پرہونے والی پہلی عالمی دو روزہ کانفرنس جمعرات (کل) سے مقامی ہوٹل میں شروع ہوگی۔ 10 اور 11 مئی کو ہونے والی اس کانفرنس کا افتتاح وائس چانسلر سندھ مدرستہ الاسلام یونیورسٹی ڈاکٹر محمد علی شیخ کریں گے۔

جبکہ ڈین فیکلٹی آف بزنس ایڈمنسٹریشن ڈاکٹر زاہد علی چنڑ استقبالیہ خطاب کریں گے۔جمعرات کے روز نو بجے شروع ہونے والی اس کانفرنس میں اقتصادیات اور تعلیم کے شعبے سے تعلق رکھنے والے کئی غیر ملکی اور ملکی ماہرین شرکت کریں گے۔ جن میں امریکا سے ڈاکٹر جو آن رولے، ڈاکٹر والس فورڈ ، لتھوینیا سے ڈالیا اسٹریمیکین اور سری لنکا سے ڈاکٹر اسوکا جیناداس شامل ہیں جبکہ پاکستان سے عثمان منیر ، شمس الدین شیخ ، مہر ملک، نسیم بیگ اور دیگر شامل ہیں۔

(جاری ہے)

اس کانفرنس میں افتتاحی اور اختتامی اجلاس کے علاوہ چھ تیکنیکی سیشنز منعقد کیئے جائیں گے۔ جس میں تجارت، معیشت، مارکیٹ سرگرمیاں، مینجمینٹ، لیڈرشپ، مارکیٹ کی روایتی اور ڈجیٹل صورتحال، بئنکنگ کا شعبہ ، سوشل کیپٹل کا کردار ، بے روزگاری ، اندرونی قرضہ جات ، زرعی شعبہ، غربت ، خوشحالی اور مائیکرو اکنامک وغیرہ جیسے موضوعات شامل ہیں۔

جن پر تحقیقی مقالہ جات پیش کئے جائیں گے۔ اس سلسلے میں سندھ مدرسہ یونیورسٹی کے وائس چانسلر ڈاکٹر محمد علی شیخ کی صدارت میں منگل کے روز یونیورسٹی کے کانفرنس روم میں ایک اجلاس منعقد کیا گیا۔ جس میں عالمی کانفرنس کے انتظامات کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔ اس موقع پر وائس چانسلر ڈاکٹر محمد علی شیخ نے کہا کہ یہ پہلی کانفرنس ہے جو بزنس ایڈمنسٹریشن ڈپارٹمینٹ کی جانب سے منعقد کرائی جارہی ہے۔

جو کہ اپنے مقصد کے حساب سے بہت ہی اہم ہے۔ جس میں دنیا بھر کے مختلف ممالک سے اقتصادی اور تعلیمی ماہرین شرکت کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ کانفرنس خاص طور پر اپنے ملک کی معیشت ، تجارت، غربت اور بے روزگاری کے معاملات پر بات کرنے اور بہتری کیلئے تجاویز دینے کے سلسلے میں ایک اہم فورم ثابت ہوگی۔ اجلاس میں بزنس ایڈمنسٹریشن فیکلٹی کے ڈین ڈاکٹر زاہد علی چنڑ، چیئرپرسن ڈاکٹر سبھاش ، رجسٹرار گلزار احمد مغل اور دیگر افسران نے شرکت کی۔