نواز شریف پر اربوں ڈالرز بھارت منی لانڈرنگ کرکے بھیجنے کا الزام، اب ایک نئی کہانی سامنے آگئی

اسٹیٹ بینک نے پاکستان سے 4.9 ارب ڈالر بھارت بھیجے جانے سے متعلق رپورٹس کو مسترد کردیا، 16ء میں ہی کہہ دیا تھا اس رپورٹ میں کوئی صداقت نہیں، اعلامیہ

منگل مئی 23:03

نواز شریف پر اربوں ڈالرز بھارت منی لانڈرنگ کرکے بھیجنے کا الزام، اب ..
․اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 08 مئی2018ء) اسٹیٹ بینک نے پاکستان سے 4.9 ارب ڈالر بھارت بھیجے جانے سے متعلق رپورٹس کو مسترد کردیا ہے۔اسٹیٹ بینک کی جانب سے جاری اعلامئے میں کہا گیا ہے کہ مرکزی بینک نے 2016 میں ہی کہہ دیا تھا کہ اس رپورٹ میں کوئی صداقت نہیں۔

(جاری ہے)

مرکزی بینک کے مطابق ورلڈ بینک نے غلط اندازوں پر رپورٹ تیار کی تھی، بینک کی مائیگریشن اینڈ ریمی ٹینسز فیکٹ بک ہجرتوں کے اعداد و شمار پر تیار کی گئی تھی جس میں 1947 کی ہجرت کے اعداد و شمار کو بھی بنیاد بنایا گیا تھا۔

اسٹیٹ بینک کے مطابق رپورٹ میں1947 میں ہجرت کرکے پاکستان آنیوالوں کو یہاں کا شہری قرار دیا تھا، اس بنیاد پر مرکزی بینک نے اس رپورٹ کی مکمل تردید کی تھی۔اعلامئے میں کہا گیا کہ اسٹیٹ بینک نے ستمبر 2016 کے اعلامئے میں بتادیا تھا کہ مالی سال 2015-16ء میں پاکستان سے صرف ایک لاکھ 16 ہزار ڈالر کی ترسیلات بھارت بھیجی گئی تھیں۔اسٹیٹ بینک کے مطابق مالی سال 2016 میں بھارت سے پاکستان 3 لاکھ 29 ہزار ڈالر آئے تھے جبکہ پاکستان سے بھارت درآمدات 45 کروڑ 50 لاکھ ڈالر تھی۔