لیبیا،درنہ شہر کو باغیوں سے چھڑانے کے لئے فوجی کارروائی کا اعلان،جنرل حفتر

منگل مئی 23:41

طرابلس(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 08 مئی2018ء) لیبیا کے مرد آہن خلیفہ حفتر نے درنہ شہر کو باغیوں سے پاک کرنے کے لئے فوجی کارروائی کا اعلان کر دیا۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق لیبیائی مرد آہن جنرل حفتر نے کہا ہے کہ وقت آگیا ہے کہ درنہ کو بھی باغیوں سے آزاد کروایا جائے۔لیبیا کے مرد آہن خلیفہ حفتر نے درنہ شہر کی باغیوں سے بازیابی کے لئے فوجی کارروائی کا اعلان کیا ہے۔

مشرقی لیبیا میں درنہ وہ واحد شہر ہے کہ جو جنرل حفتر کے کنٹرول سے باہر ہے۔

(جاری ہے)

فیلڈ مارشل حفتر نے اعلان کرتے ہوئے کہا کہ ان کی فوج نے پہلے ہی شہر میں دہشت گردوں کے ٹھکانے ختم کرنا شروع کر دیئے ہیں اور اب اس شہر پر قبضے کا وقت آن پہنچا ہے۔جنرل حفتر بن غازی میں ہونے والی ایک فوجی پریڈ سے خطاب کر رہے تھے جس میں ان کی زیر کمان فوجیوں نے اپنی طاقت کا مظاہرہ کیا۔پریڈ کا مقصد دراصل جنرل حفتر کے دہشت گردی کے خلاف چار سالہ آپریشن کی کامیابی کا جشن منانا تھا۔یاد رہے کہ اس کارروائی کے نتیجے میں انتہا پسندوں کو بن غازی سے نکال باہر کیا گیا۔جنرل حفتر اپنے حالیہ اعلان سے دو ہفتے قبل پیرس میں زیر علاج رہے اور چند دن پہلے ہی لیبیا لوٹے تھے۔

متعلقہ عنوان :