پشاور،پاک جرمن ووڈ ورکنگ سنٹرایمپلائز یونین کا سمال انڈسٹریز ڈویلپمنٹ بورڈ کی انتظامیہ کیخلاف احتجاجی مظاہر

منگل مئی 21:20

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 08 مئی2018ء) پاک جرمن ووڈ ورکنگ سنٹرایمپلائز یونین نے ریگولر بی پی ایس سکیل میں تاخیری حربوں اورتنخواہوں کی بندش پر سمال انڈسٹریز ڈویلپمنٹ بورڈ کی انتظامیہ کیخلاف گزشتہ روزبھی کوہاٹ روڈ پر احتجاجی مظاہرہ کیا جبکہ اس سلسلے میں چیف جسٹس سپریم کورٹ جسٹس ثاقب نثار سے نوٹس لینے کی اپیل کی ہے ۔مظاہرے کی قیادت یونین کے صدر مرتضیٰ خان اور جنرل سیکرٹری شاہد خان نے کی ۔

(جاری ہے)

کیمپ شرکاء نے کہاکہ 110ملازمین گزشتہ 18 سالوں سے فکسڈپے پرڈیوٹیاں دے رہے ہیں اور 2000میں گولڈن ہینڈشیک سکیم کے تحت پرانے تمام ملازمین جوریگولربی پی ایس سکیل پر ڈیوٹیاں دے رہے تھے فارغ کردئیے گئے ،وہ تمام ایس آئی ڈی بی سروس رولزمیں ووڈکیڈر کے مطابق ریگولربی پی ایس پر ڈیوٹیاں دینے والوں کو گولڈن ہینڈشیک کے بعد پاک جرمن میں فریش ملازمین فکسڈپے پربھرتی کئے گئے اور ان سے ریگولر کرانے کا وعدہ کیا لیکن اس پر عمل نہیں ہوا۔

انہوںنے کہاکہ ابھی ملازمین کی تنخواہیں بھی بند کر دی گئی ہیں جبکہ ہمارے ہڑتال سے ادارے کو کروڑوں روپے کا نقصان ہو رہا ہے ۔ انہوںنے سیکرٹری انڈسٹر ی سے بھی مطالبہ کیا کہ آئندہ بورڈ اجلاس میں ہمیں ریگولربی پی ایس دیا جائے تاکہ ہماری مشکلات کم ہو سکے۔