پورٹ قاسم پر پنجاب پاور پلانٹ کیلئے ماحولیاتی تحفظ کو نظر انداز کر کے بڑے پیمانے پر کوئلہ کی درآمد سے ماحولیاتی آلود گی پھیلنے پر پی ایس پی کا اظہار تشویش

سندھ کی ماحولیات کے تحفظ کی ایجنسی سیپا کو عوامی مفاد میں کام کرنا چاہینے نہ کہ ان کے جو کہ ماحول کو تباہ کر رہے ہیں

منگل مئی 21:30

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 08 مئی2018ء) پاک سر زمین پارٹی کے ترجمان نے پورٹ قاسم پر پنجاب پاور پلانٹ کیلئے پبلک ہیلتھ اور ماحولیاتی تحفظ کو نظر انداز کر کے پڑے پیمانے پر کوئلہ کی درآمد سے ماحولیاتی آلود گی پھیلنے پر گہری تشویش کا اظہار کیا ہے اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہاکہ اطراف میں موجود مختلف صنعتیں جنمیں فوڈ پروسیسنگ ،ادویات بنانے والی کمپنیاں ، کیمیکل بنانے والے یونٹس ، پانی صاف کرنے کے یونٹس اور آئل ریفائنریز ایسے متاثر ہورہے ہیں انہوں نے کہا کہ پنجاب میں کوئلے سے چلنے والے پاور پلانٹ کیلئے بیرون ملک سے پورٹ قاسم کوئلہ کی منتقلی سے پھیلنے والی آلودگی پر مختلف صنعت کاروں ، ماحولیاتی تنظیموں اور متصل آبادیوں کے مکینوں کی جانب سے احتجاج پر سندھ محکمہ ماحولیات نے وفاقی حکومت کو اپنے شدید اعتراضات سے آگاھ کیا ہے لیکن اس منصوبے کے ماحولیات پر نہایت خراب اثرات ہوں گے۔

(جاری ہے)

سندھ کی ماحولیات کے تحفظ کی ایجنسی سیپا کو عوامی مفاد میں کام کرنا چاہینے نہ کہ ان کے جو کہ ماحول کو تباہ کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کراچی پورٹ قاسم پر کوئلہ جمع کیا جارہا ہے جہاں سے ریل کے راستے کوئلہ پنجاب بھیجا جارہا ہے جبکہ پورٹ قاسم کے علاقے میں قائم صنعتوں کے مالکان ، مقامی آبادیوں کے مکینوں اور سماجی تنظیموں نے کوئلے کی آمد اور پنجاب منتقلی سے اڑنے والے دھنویں اور ذرات کے مراحل میں خطرناک ماحولیاتی آلودگی پھیلنے کی وجہ سے شدید خدشات ظاہر کیئے گئے ہیںِ لیکن ان پر کوئی توجہ نہیں دی جارہی جو کہ قابل مذمت ہے جںکہ مقامی آبادیوں سمیت سمندری حیات بھی شدید متاثر ہونے کا خدشہ ہے ، انہوں نے کہا کہ پہلے سے موجود صنعتی علاقوں سے خارج زہریلے مواد سے بچاو کیلئے کوئی اقدامات نہیں کئے گئے ہیں اوپر سے کوئلے کا دھواں رہی سہی کسر بھی پوری کررہا ہے ، انہوں نیکہا کہ علاقہ مکینوں اور اطراف میں موجود صنعتوں کے نمائندوں اور سیپا کی جانب سے اٹھائے جا نے والے اعتراضات کو فوری دور کرنے کے لئے اقدامات کئے جائیں انہوں نے وفاقی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ کوئلہ کی درآمد سے پیدا ہونے والی ماحولیاتی آلودگی کو روکنے کیلئے بین الاقوامی اسٹینڈرڈ کے تحت تمام ماحولیاتی آلودگی سے بچنے کیلئے اقدامات کو بروئے کار لایا جائے اور پورٹ قاسم اور ملحقہ علاقوں کو کوئلہ کی کالی تحہ میں چھپنے سے بچایا جائی-