پاکستان کو کمزور کرنے والوں کے خلاف ادارے خاموش نہیں،نبیل گبول

بھارت رقم بھیجنے کی تحقیقات ہوں گی، ڈان لیکس معاملے کو نظر انداز نہیں کیا گیا،عمران خان کا اگلی حکومت بنانے کا تاثر دیا جا رہا ہے، رہنما پاکستان پیپلزپارٹی

منگل مئی 23:50

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 08 مئی2018ء) پاکستان پیپلزپارٹی نے رہنما نبیل گبول نے کہا ہے کہ بھارت رقم بھیجنے کی تحقیقات ہوں گی، پاکستان کو کمزور کرنے والوں کے خلاف ادارے خاموش نہیں ،ڈان لیکس معاملے کو بھی نظر انداز نہیں کیا گیا نواز شریف اگلے انتخابات جیت کر قوانین تبدیل کرنے کی خیال میں ہیں جو ہو نہیں سکتا۔ ڈان لیکس ایک حملہ تھا اسے نظر انداز نہیں کیا گیا عمران خان کا اگلی حکومت بنانے کا تاثر دیا جا رہا ہے نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہونے نبیل گبول نے کہا ہے کہ بھارت میں ڈالر بھیجنے کے معاملے کی تحقیقات ضرور ہوں گی پانامہ کیس کی طرح اس معاملے پر بھی جے آئی ٹی بننی چاہئے تحقیقات ہونی چاہیں کہ رقم کسی مد میں بھیجی گئی۔

انہوں نے کہا ہے کہ کمزور کرنے والوں کے خلاف ادارے خاموش نہیں ڈان لیکس ایک حملہ تھا۔

(جاری ہے)

اسے نظر انداز نہیں کیا گیا معاملہ ابھی ختم نہیںہوا نواز شریف کی اداروں کے خلاف بات کرنے کی وجہ اب سامنے آ رہی ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ میں سمجھتا ہوں کہ سخت احتساب ہو گا الیکشن میں تاخیر کی باتیں غلط ہیں انتخابات وقت پر ہونے چاہئے۔ انہوں نے کہا ہے کہ نواز شریف خیالی میں بیٹھے ہیں کہ وہ اگلے انتخابات میں کامیابی حاصل کر کے بہت سے قوانین میں تبدیل کر لیں گے میں نہیں سمجھتا کہ یہ کامیاب ہوں گے انہوں نے کہا ہے کہ نواز شریف کے مقدمہ میں تاخیر نہیںہونی چاہئے۔

انہوٖں نے کہا ہے کہ نواز شریف کے مقدمہ میں تاخیر نہیں ہونی چاہئے اگر 2007 والی صورتحال ہو گی تو انتخابات میں تاخیر ہو سکتی ہے ۔ان کا کہنا تھا کہ یہ تاثر دیا جا رہا ہے کہ عمران خان اگلی حکومت بنائیں گے۔