افغان طالبان کی طرف سے پاکستان علماء کونسل کے ساتھ نہ کوئی رابطہ ہوا ہے،نہ ہی کوئی خط موصول ہوا ہے ‘مولانا محمد اشفاق پتافی

بدھ مئی 17:00

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 09 مئی2018ء) پاکستان علماء کونسل کے ترجمان مولانا محمد اشفاق پتافی نے کہا ہے کہ افغان طالبان کی طرف سے پاکستان علماء کونسل کے ساتھ نہ کوئی رابطہ ہوا ہے اور نہ ہی پاکستان علماء کونسل کو کوئی خط موصول ہوا ہے ، انڈونیشیاء میں ہونے والی کانفرنس کے حوالے سے پاکستان علماء کونسل کے مرکزی چیئرمین حافظ محمد طاہر محمود اشرفی کو دعوت تاخیر سے موصول ہوئی تھی جبکہ مرکزی چیئرمین حافظ محمد طاہر محمود اشرفی کی پہلے سے مصروفیات طے تھیں جس کی وجہ سے وہ انڈونیشاکانفرنس میں شریک نہیں ہوئے ۔

پاکستان علماء کونسل کے ترجمان نے مزید کہا کہ افغانستان کا معاملہ افغان گروپوں کو حل کرنا ہے ، پاکستان نے ہمیشہ امن کی کوششوں کی حمایت کی ہے اور ہم امن کی کوششوں کیلئے حمایت کرتے رہیں گے ۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ افغان ذرائع ابلاغ کی طرف سے بے بنیا دتبصرے اور خبریں افسوسناک ہیں، پاکستان علماء کونسل نے ہمیشہ انتہاء پسندی اور دہشت گردی کی مذمت کی ہے اور ہم سمجھتے ہیں کہ انتہاء پسندی اور دہشت گردی کا خاتمہ مسلم امہ کے باہمی اتحاد سے ہی ممکن ہے ، الزام تراشی اور بے بنیاد الزام لگانے سے یہ مسئلہ حل نہیں ہو سکتا۔ انہوں نے کہا کہ امن کیلئے جو بھی کوشش ہو گی پاکستان کی حکومت ، عوام اور علماء نے پہلے بھی اس کی تائید کی ہے آئندہ بھی اس کی تائید کریں گے۔