سندھ میں عام انتخابات کی مجوزہ پولنگ اسکیم کے مطابق 2لاکھ سے زائد عملے کی تربیت کی جائیگی

بدھ مئی 19:12

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 09 مئی2018ء) سندھ میں عام انتخابات کی مجوزہ پولنگ اسکیم کے مطابق 2لاکھ16ہزار659افسران اور عملے کی تربیت کی جائے گی۔ الیکشن کمیشن کے ذرائع کے سندھ میں عام انتخابات 2018 کے لئے تیار کی گئی مجوزہ پولنگ اسکیم میں 17ہزار840پولنگ اسٹیشن اور 56ہزار814پولنگ بوتھ تجویز کئے گئے ہیں ۔

(جاری ہے)

مجوزہ پولنگ اسکیم کے مطابق 29ڈسٹرکٹ ریٹرننگ افسران(ڈی آراوز)اور191ریٹرننگ افسران(آر اوز) ہیں ،جبکہ پریذئیڈنگ افسران(پی اوز)،پولنگ افسران(پی اوز) ،اسسٹنٹ پریذئیڈنگ افسران(اے پی اوز) اور نائب قاصدین کی تعداد 2لاکھ6ہزار439ہے ۔

جن میں 2لاکھ6ہزار122مجوزہ یقینی عملہ اور 10ہزار317ممکنہ اضافی عملہ ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ حتمی مرحلے میں کمی بیشی ممکن ہے۔۔الیکشن کمیشن کے ذرائع کے مطابق عملے کی تربیت کا عمل جاری ہے ۔زیل میں دئے گئے چارٹ میں مجوزہ پولنگ اسکیم کے مطابق متعلقہ اعدادوشمار دئے گئے ہیں۔