شنگھائی تعاون تنظیم2018سمٹ آئندہ ماہ جون میں چینی شہر چھنگ تاو میں منعقد ہوگی

پاکستان ، روس ، نیپال اور ازبکستان سمیت آٹھ ممالک نے نمائش میں شرکت کی تصدیق کر دی

بدھ مئی 19:42

ووہان (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 09 مئی2018ء) شنگھائی تعاون تنظیم کی دو ہزار اٹھارہ سمٹ رواں سال جون میں چین کے صوبے شندونگ کے شہر چھنگ تاو میں منعقد ہوگی، روس ، پاکستان ،نیپال اور ازبکستان سمیت آٹھ ممالک نے نمائش میں شرکت کی تصدیق کر دی ۔ چائنہ ریڈیو انٹرنیشنل کے مطابق چین کے وزیر برائے ثقافت و سیاحت لی جن زاو نے چین کے وسطی شہر وو ہان میں منعقدہ شانگھائی تعاون تنظیم کے رکن ملکوں کے درمیان سیاحتی تعاون کے حوالے سے تجاویز پیش کیں۔

ان میں تنظیم کے رکن ملکوں کے سیاحتی تعاون کے فارمولے پر عمل درآمد،، سیاحتی منصوبہ بندی کے سلسلے میں تعاون، متعلقہ پالیسی سازی میں باہم تبادلہ وغیرہ شامل ہیں۔ شنگھائی تعاون تنظیم کی چھنگ تاو سمٹ جون میںمنعقد ہوگی۔ چینی کمیونسٹ پارٹی کی چھنگ تاو شہری کمیٹی کے سیکریٹری چانگ جیانگ تھنگ نے حال ہی میں کہا کہ آنے والی سمٹ کی تیاریاں چینی صدر شی جن پنگ کی اہم ہدایت کی روح کے مطابق کی جارہی ہیں ۔

(جاری ہے)

جوش و جذبے سے سمٹ کا انعقاد کیا جائے گا۔کم اخراجات میں زیادہ سے زیادہ کام کئے جائیں گے۔کوشش کی جائے گی کہ جوش کے ساتھ ساتھ یہ سمٹ شاندار بھی ہو اور کم اخراجات کے ساتھ ساتھ جذبے میں کمی نہیں آئے گی۔منصوبے کے مطابق شنگھائی تعاون تنظیم سے متعلق ممالک کی درآمدی مصنوعات کی نمائش جون کی پندرہ تاریخ سے اٹھارہ تاریخ تک چھنگ تاو میں منعقد ہوگی۔اب تک روس ، پاکستان ،نیپال اور ازبکستان سمیت آٹھ ممالک نے نمائش میں شرکت کی تصدیق کی ہے۔

متعلقہ عنوان :