اسلام آباد، بھتہ نہ دینے پر سبزی فروش کو چاقو کے وار سے زخمی کرد یا گیا

بدھ مئی 23:42

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 09 مئی2018ء) تھانہ سبزی منڈی کی حدود میں غریب سبزی فروشوں پر چاقوؤں کے وار بھتہ نہ دینے پر ٹوبہ ٹیک سنگھ سے آئے سبزی فروش محسن حسین کو چاقو کے وار سے زخمی کیا گیا، دو افراد نے محسن حسین کو قابو کیے رکھاجبکہ ایک شخص نے چاقو سے حملہ کیا ، 1122 زخمی شہری کو پمز اسپتال منتقل کیا،تاہم سبزی منڈی پولیس چند گز کے فاصلے سے موقع پر آدھا گھنتا تک نہ پہنچ سکی ۔

تفصیلات کے مطابق سبزی منڈی میں بھتہ مافیا سرگرم ہے چاہے ریڑھی ہو یا گاڑی بھتے کے بغیر کوئی وہاں کاروبار نہیں کر سکتا ، بھتہ مافیا غریب سبزی فروشوں سے ہزار ہزار روپے وصول کرتا ہے جبکہ سبزی فروش بھتہ دینے کے بعد ہی سبزی بیچنے کی اجازت دی جاتی ہے۔ سبزی فروشوں کا کہنا ہے کہ سبزی منڈی میں غریب سبزی فروشوں کو ہراساں کیا جاتا ہے ۔

(جاری ہے)

موقع پر موجود ریڑھی بانوں نے بتایا کہ تھانہ سبزی منڈی پولیس ہی بھتہ خوروں کی سرپرست ہے ۔

پولیس بھتہ خور گروپوں کیخلاف کوئی کارروائی نہیں کرتی۔سبزی منڈی میں پہلے بھی بہت قتل ہو چکے ہیںتاہم پولیس کارروائی نہیں کرتی۔سبزی فروشوں نے کہا کہ اگر پولیس کے پاس شکایت لے کر جاؤ تو آگے سے پولیس جواب دیتی ہے کہ تم بھی مارو بعد میں ہمارا کیس بنے گا پھر ہمارے پاس آنا ۔تاہم دوسری طرف پولیس نے بھتہ خوری سے متعلق سبزی فروشوں کے موقف کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ واقعے میں بھتہ خوری کا عنصر شامل نہیںہے۔۔پولیس کے مطابق واقعہ ذاتی جھگڑے کا شاخسانہ ہے۔۔۔۔