سوئی سدرن کی جانب سے گیس چوروں کے خلاف مہم تیز ، کراچی اور لاڑکانہ میں چھاپے

ملزمان گرفتار، جرمانہ عائد، چوری میں استعمال کیا جانے والا سامان ضبط، گیس چوروں کے خلاف کوئی رعایت نہیں کی جائے گی۔ آپریشن چیف

بدھ مئی 23:51

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 09 مئی2018ء) سوئی سدرن گیس نے کراچی اور لاڑکانہ کے علاقے میں گیس چوروں کے خلاف کاروائی کی جس کے نتیجے میں دوملزم کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ ایس ایس جی سی کی جانب سے گیس چوری روکنے کے لیے قائم کردہ ٹاسک فورس کائونٹر گیس تھیفٹ آپریشن ( سی جی ٹی او) لاڑکانہ کے علاقے ٹُھل میں کاروائی کی جہاں ملزم گوہر خان عرف بابو اور کرم اللہ ایس ایس جی سی کی مین گیس لائین کو پنکچر کر کے اس کوپاور جنریشن کے لئے گیس چوری کر رہے تھے۔

دوسری جانب کراچی کے علاقے لانڈھی کی مری کالونی میں ربڑ کے پائپ سے میں لائن سے ڈائریکٹ گیس چوری کی جا رہی تھی۔ایس ایس جی سی ٹاسک فورس نے کاروائی کرتے ہوئے چوری کی گیس لائین منقطع کر دیں جبکہ لوڈ کے حساب سے ملزم پر جرمانہ بھی عائد کردیا گیا ہے۔

(جاری ہے)

دوسری جانب حیدرآباد میں مین بریک شو مارکیٹ پر چھاپہ مار کاروائی کی گئی جہان پر ملزم ڈائیریکٹ سروس لائن سے پائپ لگا کر گیس چوری کر رہا تھا۔

۔ ایس ایس جی سی ٹیم نے کلیمپ کاٹ کر سروس لائین غیر موئثر کردی ہے۔ اور ملزم پر جرمانہ بھی عاید کردیا ہے۔ سی جی ٹی او کے ڈائریکٹر جنرل بریگیڈیئر ریٹائرڈ محمد ابو ذر نے کہا ہے کہ گیس چوری کسی بھی نوعیت کی ہو، خواہ وہ صنعتی ، کمرشل یا گھریلو ہو ببہر حال سب چوروں کے خلاف بلا تفریق کاروائی کی جائے گی ۔انہوں نے مزید کہا کہ گیس کی چوری سے کمپنی کی مالی حالت پر بہت برا اثر پڑ رہا ہے اس لئے گیس چوروں سے کوئی رعایت نہیں برتی جائے گی۔