کیاجنوبی پنجاب صوبہ محاذ کے لوگ عمران خان کو جتوا سکیں گے؟

Sumaira Faqir Hussain سمیرا فقیرحسین جمعرات مئی 13:21

کیاجنوبی پنجاب صوبہ محاذ کے لوگ عمران خان کو جتوا سکیں گے؟
لاہور (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 10 مئی 2018ء) : نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں بات کرتے ہوئے معروف صحافی عارف نظامی نے کہا کہ عمران خان نے جو سو دنوں کا وعدہ جنوبی پنجاب صوبہ محاذ سے کیا ہے یہ سب وعدے اس بات سے مشروط ہیں کہ وہ حکومت بنا لیں، خسرو بختیار نے کہا کہ 3،3 مرتبہ وزیراعظم بننے والے ملک سے مخلص نہیں تھے،تو یہ خود کتنے مخلص ہیں؟ یہ خود ہرحکومت میں اقتدار کے مزے لوٹتے رہے ہیں، ان کی کتنی وفادرای ہے جنوبی پنجاب کے ساتھ ،انہوں نے یہ سب ایک شخص کے مشورے پر کیا تھا ، ان کا خیال تھا کہ ہم اپنا وزن بڑھا کر پی ٹی آئی میں جائیں گے۔

جہاں تک مخلصی کی بات ہے تو یہیں سے اندازہ کر لیں کہ یہ لوگ سبز باغ دکھا کر چلے جاتے ہیں،خسرو بختیار صاحب خود لاہور کی جرنیلوں کی کالونی عسکری میں رہتے ہیں ، وہ خود لاہور کے باسی ہیں، ان کا زیادہ سفر لندن اور لاہور کے درمیان رہتا ہے۔

(جاری ہے)

رحیم یار خان اور وہاں کے لوگ ان کو الیکشن کے وقت یاد آتے ہیں ، انہوں نے کہا کہ میرے خیال سے تو یہ سب ایک اسٹنٹ ہے اور کچھ بھی نہیں ہے۔

انہوں نے جو نعرہ لگایا ہے اس کا یقیناً ووٹ ہو گا ورنہ وہ کیوں نعرہ لگاتے۔ عارف نظامی نے کہا کہ خسرو بختیار ایک دو رتبہ ہارے بھی ہیں۔ یہ ہمیشہ رحیم یار خان کی سیاست میں کبھی احمد محمود کے ساتھ ہوتے ہیں کبھی جہانگیر ترین سے مل جاتے ہیں کبھی ان کے خلاف ہیں، اب تو جہانگیر ترین وہاں اسٹیک ہولڈر نہیں رہے وہ اب لودھراں چلے گئے ہیں۔یہ سارے جوڑ توڑ جاگیرردارانہ سیاست ہے جس کا اقتدار کے مزے لوٹنے کے لیے استعمال کیا جا رہا ہے۔

ورنہ ان لوگوں کا ایشوز سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ ان کا فارمولا یہی ہے کہ جنوبی پنجاب سے تمام سیٹیں جیت کر عمران خان کو دے دی جائیں گی۔ ہو سکتا ہے کہ ایسا ہی ہو۔ لیکن یہ لوگ اپنی عوام اور ووٹرز کے ساتھ مخلص نہیں ہیں کیونکہ انہوں نے ہمیشہ ہی ان کو دھوکہ دیا ہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :