بلدیہ عظمی کراچی نے شہرقائد میں نیگلیریا وائرس الرٹ جاری کر دیا

سوئمنگ پول میں نہانے سے گریز کیا جائے اور نہانے کیلئے پانی کو گرم کرکے استعمال کیا جائے، ڈائریکٹر ہیلتھ کے ایم سی

جمعرات مئی 16:12

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 10 مئی2018ء) بلدیہ عظمی کراچی نے شہرقائد میں نیگلیریا وائرس الرٹ جاری کر دیاہے۔ ڈائریکٹر ہیلتھ کے ایم سی کے مطابق سوئمنگ پول میں نہانے سے گریز کیا جائے اور نہانے کیلئے پانی کو گرم کرکے استعمال کیا جائے۔تفصیلات کے مطابق بلدیہ عظمی کراچی نے شہر میں نیگلیریا وائرس الرٹ جاری کر دیا ہے، الرٹ میں کہا گیا ہے کہ پانی میں کلورین کی مطلوبہ مقدار نہ ہونے پر نیگلیریا شہریوں کومتاثرکرسکتا ہے۔

ڈائریکٹرہیلتھ کے ایم سی ڈاکٹربیربل کے مطابق سوئمنگ پول ، جوہڑ اور تالابوں میں نہانے سے گریزکیا جائے، ایک ہزار لیٹرپانی میں ایک چمچہ کلورین شامل کی جائے۔ڈاکٹربیربل نے کہا کہ بچے بارش سے جمع پانی میں نہانے سے گریزکریں اور نہانے کیلئے پانی کو گرم کرکے استعمال کیا جائے۔

(جاری ہے)

واضح رہے کہ دو روز قبل کراچی میں رواں سال نگلیریا کا پہلا کیس سامنے آیا تھا، چالیس سالہ پرویز نجی اسپتال میں چل بسا تھا جبکہ محکمہ صحت نے نگلیریا سے ہلاکت کی تصدیق کر دی تھی۔

ماہرین صحت کے مطابق نگلیریا ایک ایسا امیبا ہے، جو اگر ناک کے ذریعے دماغ میں داخل ہوجائے تو دماغ کو پوری طرح چاٹ جاتا ہے، جس سے انسان کی موت واقع ہوجاتی ہے۔ نگلیریا سوئمنگ پول، تالاب چھت اور زیر زمین پانی کی ٹینکیوں میں پیدا ہوتا ہے۔شدید گرمی نگلیریا کی افزائش کا سبب بنتی ہے، نگلیریا سے بچنے کیلئے پانی میں کلورین کی مطلوبہ مقدار ضروری ہے۔

متعلقہ عنوان :