شہرکے کسی علاقے میں پانی کی قلت برداشت نہیں کی جائے گی،میئر سکھر بیرسٹر ارسلان اسلام شیخ کی ہدایت

جمعرات مئی 22:51

سکھر (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 10 مئی2018ء) میئر سکھر بیرسٹر ارسلان اسلام شیخ نے واٹر ورکس کے چاروں فیز کے انجینئرز والوز مینوں اوراسٹاف کو ہد ایت کی ہے کہ شہرکے کسی علاقے میں پانی کی قلت برداشت نہیں کی جائے گی لہٰذا بلاتاخیر ان علاقوں میں بھی پانی پہنچایاجائے جہاں پانی کی شکایات ہیں جبکہ افسران شیڈ ول کے مطابق پانی لازمی فراہم کریں اور شیڈ ول جاری کریں ، پانی کھولے جانے کے عمل کی 24 گھنٹے نگرانی کریں ۔

انہوں نے ہدایت کی ہے کہ رمضان المبارک کے دوران پانی کی شکایات کو نظر انداز نہیں کیا جائے گا ،میئرسکھر نے کہا کہ وہ از خود ڈ پٹی میئراور متعلقہ یوسی کے چیئرمین کے ساتھ مختلف علاقوں کادورہ کریں گے تاکہ فراہمی آ ب کا جائزہ لے سکیں ۔ دریں اثناء ڈ پٹی میئرطارق چوہان سے یوسی 12،13 کے مکینوں اور خواتین نے ان کے دفتر میں ملاقات کی اور پانی نہ ملنے کی شکایات کیں ، ڈ پٹی میئرنے فوری طور پر XENشرف الد ین ڈ نو اورواٹرورکس کے تمام انجینئرز کو طلب کرلیااور ان یوسیز میں پانی کی فراہمی کی ہدایت کی اور اس سلسلے میں معلومات بھی لیں ۔

(جاری ہے)

انہوں نے وفد سے کہا کہ آج رات سے پانی فراہم کر دیا جائے گا جبکہ ٹکر پر تعمیر کی گئی ٹنکی سے ملحق بوسید ہ پائپ تبد یل کیا جارہاہے جسے آ ئندہ چند دنوں میں تبد یل کر دیا جائے گا اس کے بعد ان علاقوں میں پانی کی قلت دور ہوجائے گی تاہم چند روز میں پانی جزوی طور پر فراہم کیا جائیگا ۔ ڈ پٹی میئرنے یقین دلایا کہ جہاں کہیں پانی کی شکایات ہیں وہاں پوری توجہ دی جائے گی ۔

وفد نے صفائی ، ستھرائی نالیوں کی صفائی نہ ہونے اور سینیٹری ورکرز نہ ہونے کی شکایت کی ۔ ڈپٹی میئر نے صفائی کی شکایات پر چیف آ فیسر ، چیف سینٹر ی انسپکٹر اور سینٹر ی انسپکٹر کو طلب کر لیا اور ہد ایت کی کہ ان علاقوں میں بھی سینیٹری ورکرز کی تعداد فوری بڑھادی جائے اور یو سی 13-12 میں صفائی روزانہ کی بنیاد پر کی جائے ، اب کوئی شکایت نہیں ہونی چاہئے ۔ دریں اثناء انہوں نے XENاور تمام انجینئر نگ اسٹاف کو شہرمیں فراہمی آ ب سے متعلق شکایات کا ازالہ کرنے ،دشواریوں ،حائل رکاوٹوں کو دور کرنے کی ہدایت کی اور کہا کہ ایسی حکمت عملی پر عمل کیا جائے کہ پانی ہر یو سی میں فراہم کیا جاسکے۔