خواہش ہے صوابی کا کوئی بچہ تعلیم سے محروم نہ رہے ،صوابی یونیورسٹی میں کوالٹی تعلیم کی فراہمی پر دلی اطمینان ہے، اسد قیصر

جمعرات مئی 23:37

صوابی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 10 مئی2018ء) سپیکر خیبرپختونخوااسمبلی اسد قیصر نے کہا ہے کہ صوابی میں تعلیمی ادارے قائم کرکے اپنے خواب کی تعبیرحاصل کرنیکی خواہش ہے کہ صوابی کا کوئی بچہ تعلیم سے محروم نہ رہے یونیورسٹی آف صوابی میں کوالٹی تعلیم کی فراہمی پر دلی اطمینان ہے۔ انہوںنے ان خیالات کا اظہار یونیورسٹی آف صوابی کی نئی تعمیر شدہ عمارت کاوزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا پر ویز خٹک کے ہمراہ افتتاح کرنے بعد منعقدہ افتتاحی تقریب سے خطا ب کرتے ہوئے کیا ۔

تقریب سے وزیر اعلیٰ پر ویز خٹک نے خطا ب کرتے کہا کہ صوابی میں عمران خان کے وژن کے مطابق تبدیلی کا عمل کا فی حد تک مکمل کیا جس کے ثمرات سے عوام مستفید ہو رہے ہیں۔۔تعلیم ہماری ترجیحات میں ہے صوبائی حکومت نے سرکاری سکولوں میںبہتری لانے کے ساتھ ساتھ انگلش میڈیم کا اجراء کیا تاکہ سرکاری سکولوں کے فارغ التحصیل نوجوان بھی پرائیویٹ سکولوں کے نوجوانوں کا مقابلہ کرسکیں ۔

(جاری ہے)

سپیکر نے اس موقع کہا کہ صوابی یونیورسٹی کیلئے صوبائی حکومت نے اب تک 80کروڑ روپے کے فنڈز فراہم کئے جبکہ آئندہ بھی یونیورسٹی ہذا کی ضروریات پوری کی جائے گی ۔انہوںنے کہا میںنے منتخب ہونے کے بعد اپنی پہلی ترجیح میں ضلع صوابی میں تعلیمی اداروں کے قیام کو شامل کیا وومن یونیورسٹی گجوخان میڈیکل کالج ،ٹیکنیکل کالجز،کالجز اورسکولوں کا قیام اسی ترجیح کے کڑی ہے میری خواہش ہے کہ صوابی سمیت پورے صوبے میں موجود کوئی بچہ بھی تعلیم سے محروم نہ رہے ۔

انہوںنے کہا کہ صوابی میں نبی کے قریب ہی پی اے ایف ایجوکیشن کمپلیکس کاقیام عمل لایا جارہا ہے اسی طرح کرنل شیر خان انٹرچینج قریب ایک بڑا ایجوکیشن سٹی قائم ہو گا ان تعلیمی اداروں کے قیام سے صوابی سمیت پورے صوبے میں تعلیمی انقلاب برپاہوگااور نوجوانوں اعلیٰ تعلیمی سہولیات میسر ہو گی ۔انہوںنے کہا کہ ان تعلیمی اداروں سے فارغ التحصیل نوجوان آئندہ ملک کی بھاگ دوڑ سنبھال کربہترین خدمات کریں گے ۔

سپیکر نے کہا کہ صوابی یونیورسٹی صوابی عوام کے لئے ایک بہترین تحفہ ہے سپیکر نے بتایا کہ رشکئی انٹر چینج کے قریب ایک بڑے اکنامک زون کے قیام کیلئے جلد افتتاح کیا جائے گااس اکنامک زون کے قیام کے بعد تقریباًبیس لاکھ روزگار کے مواقع پید اہو ں گے ۔جس کے باعث بے روزگار ی میں کافی حدتک قابوپانے میں مدد ملے گی ۔