نئے ائیر پورٹ پر نیا ٹیکس

نیو اسلام آباد انٹرنیشنل ائیر پورٹ پر این ایچ اے نے نئے ٹیکس کی وصولی شروع کر دی

Sumaira Faqir Hussain سمیرا فقیرحسین جمعہ مئی 16:30

نئے ائیر پورٹ پر نیا ٹیکس
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 11 مئی 2018ء) : نیو اسلام آباد انٹرنیشنل ائیر پورٹ کے فعال ہوتے ہی نیشنل ہائی وے اتھارٹی (این ایچ اے) نے نیا ٹیکس وصول کرنا شروع کر دیا ہے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق ائیر پورٹ کے افتتاح کے ایک ہفتے کے بعد ہی کشمیر ہائی وے پر نیا ٹول پلازہ قائم کر دیا گیا ہے۔ این ایچ اے میٹروبس منصوبہ تو مکمل نہ کر سکی لیکن ٹیکس وصولی ابھی سے شروع کر دی ہے۔

دوسری جانب وفاقی وزیر جنید انور این ایچ اے کی جانب سے وصول کیے جانے والے نئے ٹیکسز سے بے خبر ہیں۔ میڈیا رپورٹ میں بتایا گیا کہ یہ ٹول پلازہ نیو اسلام آباد انٹرنیشنل ائیر پورٹ کے سامنے لگایا گیاہے۔ ائیر پورٹ پر آنے جانے والے مسافروں سے اس ٹیکس کی وصولی کی جاتی ہے۔ شہریوں کو اس نئے ٹیکس کے لاگو ہونے پر کافی مشکلات کا سامنا ہے۔

(جاری ہے)

شہریوں کا کہنا ہے کہ ٹول پلازہ کا ٹیکس ادا کر کے جب ہم ائیر پورٹ جاتے ہیں تو سول ایوی ایشن حکام الگ سے پارکنگ کی فیس وصول کرتے ہیں۔

اس مناسبت سے ہمیں ایک وقت میں دو سے تین جگہ ٹیکس ادائیگی کرنا پڑتی ہے۔ یاد رہے کہ وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے یکم مئی کو 13 سال میں مکمل ہونے والے نیو اسلام آباد انٹرنیشنل ائیر پورٹ کا افتتاح کیا تھا۔ جدید ترین سہولیات سے آراستہ ملک کے سب سے بڑے انٹرنیشنل ایئرپورٹ کی افتتاحی تقریب کے موقع پر وفاقی وزراء سمیت پی آئی اے کے افسران اور دیگر متعلقہ حکام موجود تھے۔

اس ائیر پورٹ پر سب سے پہلے کراچی سے آنے والی پی آئی اے کی پرواز پی کے 300 نے نیو اسلام آباد ایئرپورٹ پر لینڈ کیا۔نیو اسلام آباد انٹرنیشنل ایئر پورٹ 19 مربع کلو میٹر پر محیط ہے جہاں سے پروازوں کا باقاعدہ آغاز بروز جمعرات 3 مئی سے ہوگا۔نیو اسلام آباد ایئرپورٹ کا رن وے ساڑھے 3 کلو میٹر سے زائد طویل ہے جو پاکستان کا سب سے بڑا رن وے ہے ۔

اس رن وے پر اے تھری ایٹی سمیت دنیا کا بڑے سے بڑا ہوائی جہاز دُھند میں بھی لینڈ کر سکتا ہے۔ جدید ترین سہولیات سے آراستہ، 2 رن وے والے نیو اسلام آباد انٹرنیشنل ایئرپورٹ کی عمارت کا ڈیزائن جہاز کے پروں کے طرز پر بنایا گیا ہے جہاں بیک وقت 28 ہوائی جہازوں کے مسافروں کو سہولیات مہیا کی جا سکتی ہیں۔ اسلام آباد کا نیا انٹرنیشنل ایئرپورٹ خطے کے ایوی ایشن حب کے طور پر ڈیزائن کیا گیا جہاں مسافروں کی سہولت کے لیے 3 شاپنگ مالز، گالف کورس، سینما گھر،ایک بڑا اسپتال، کنونشن سینٹر، ڈیوٹی فری شاپس اور ریسٹورنٹ وغیرہ موجود ہیں۔

اس کے علاوہ نئے ایئرپورٹ پر بین الاقوامی معیار کے سیلف چیک ان کاؤنٹرز، لانگ ٹائم پارکنگ، 8 فائر کریش ٹینڈرز، جدید ترین ایئرفیلڈ، طیاروں کو فنی سہولیات فراہم کرنے کے لیے جدید ترین ایم آر او سسٹم اور الگ کارگو ٹرمینل بھی بنایا گیا ہے۔ایئرپورٹ پر کارگو ویلیج بھی بنایا گیا ہے جبکہ گراؤنڈ ہینڈلنگ ایجنسیز نے بھی اپنے کام کا آغاز کر رکھا ہے۔ مزید برآں پاکستان کے سب سے بڑے انٹرنیشنل ایئرپورٹ کی سکیورٹی پر ائیر پورٹ سکیورٹی فورس کے 4 ہزار جوان اور رینجرز کے دستے تعینات ہوں گے۔ اس کے علاوہ سکیورٹی کو مزید بہتر اور فول پروف بنانے کے لیے جدید ترین لیزر سکیورٹی سسٹم بھی نصب کیا گیا ہے۔