ٹی وی چینلز پراذان نشرکرنے اور بیہودہ پروگرامات کی بند ش خوش آئند ہے‘میاں مقصود احمد

ملک کے اسلامی تشخص کومجروح کرنے کیلئے بے حیائی کے کلچر کوعام کیاجارہاہے‘ امیر جماعت اسلامی پنجاب

جمعہ مئی 19:29

ٹی وی چینلز پراذان نشرکرنے اور بیہودہ پروگرامات کی بند ش خوش آئند ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 11 مئی2018ء) متحدہ مجلس عمل پنجاب کے صدر اور امیرجماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمدنے کہاہے کہ اسلام آباد ہائی کورٹ کی جانب سے ٹی وی چینلز کو پانچ وقت کی اذان نشرکرنے اور رمضان المبارک کے مہینے میں بے ہودہ پروگرامات کی بندش کاحکم خوش آئند ہے۔ اسلام کے نام پر وجود میں آنے والے ملک میں ایک سوچی سمجھی سازش کے تحت مغربی کلچر اور ہندوانہ تہذیب کوفروغ دیتے ہوئے ملک کے اسلامی تشخص کو مجروح کرنے کے لیے معاشرے میں بے حیائی کو عام کیاجارہا ہے۔

اس اقدام کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے۔انہوں نے کہاکہ جسٹس شوکت عزیز صدیقی کی جانب سے تمام الیکٹرونک میڈیا کو پیمراکے ذریعے کوڈ آف کنڈیکٹ کاپابند بنا نا،رمضان کے دوران ٹی وی چینلز پر نیلام گھر اور سرکس لگانے پر پابندی کو پوری پاکستانی قوم سراہتی ہے۔

(جاری ہے)

اسلام کا تمسخر اڑانے کی کسی کو بھی اجازت نہیں دی جاسکتی ۔انہوں نے کہاکہ بدقسمتی سے دیگر امور میں ناکامیوں کی طرح اسلامی شعائرکے تحفظ میں بھی حکومت ناکام ہوگئی ہے۔

حکومت وقت کی ذمہ داری ہے کہ وہ اسلامی عقائد کاتحفظ کرے ۔انہوں نے کہا کہ ٹی وی چینلز پر بے حیائی کا سیلاب امڈ آیا ہے،جس سے معاشر ہ تباہ و برباد ہو رہا ہے۔ المیہ یہ ہے کہ حکومت کو لوٹ مار کے سواکوئی کام نہیں۔انہوں نے کہاکہ ساراسال ناچنے اور گانے والے رمضان المبارک کی نشریات میں سرپہ ڈوپٹہ اوڑھ کر شلوار قمیض اور واسکوٹ پہن کر ایک نیاروپ دھار لیتے ہیں اور عوام کو دین سیکھنانے لگتے ہیں۔اسلام آباد ہائی کورٹ کی جانب سے ایسے کرداروں کی نفی مثبت اقدام ہے۔دینی موضوعات پرجیدعلماکرام کومدعوکیاجاناچاہئے تاکہ اسلام کاحقیقی پیغام عام لوگوں تک پہنچ سکے۔